file photo

این آر او نہیں انصاف مانگ رہے ہیں: رانا ثناء اللہ
11 اگست 2020 (15:22) 2020-08-11

لاہور: مسلم لیگ ن کے رہنما رانا ثناء اللہ نے کہا کہ این آر او نہیں انصاف مانگ رہے ہیں، انہوں نے کہا کہ حکومت اوچھے ہتھکنڈوں پر اتر آئی۔ سیاسی مخالفین سے انتقام لے رہی ہے، آج نیب آفس کو بھی قلعہ بنا دیا گیا۔

لیگی رہنما محمد زبیر نے مریم نواز کی آج کی پیشی کو سیاسی تحریک کے آغاز کا ٹریلر قرار دیا، بولے کارکنان اکٹھے اس لئے ہوئے ہیں کہ مریم ایک سیاسی لیڈر ہے۔ جبکہ خواجہ عمران نذیر نے کہا کہ کہنے کو ملک میں جمہوریت ہے، لیکن حکومت کا رویہ جمہوری نہیں۔

واضح رہے کہ مسلم لیگ ن کی مرکزی صدر مریم نواز کی پیشی کےموقع پر نیب دفتر کے باہر ہنگائی آرائی ہوئی  جس کے بعد نیب نے مریم نواز کی پیشی منسوخ کردی ہے۔

ابتدائی اطلاعات مطابق ن لیگ کے کارکنوں کا نیب آفس کے باہر سیکیورٹی اہلکاروں سے جھگڑا ہوا ہے۔کشیدہ صورتحال کے پیش نظر نیب نے مریم نواز کی پیشی منسوخ کردی ہے ۔   پولیس کی جانب سے لیگی کارکنوں کو منتشر کرنے کے لیے شیلنگ کی گئی ہے۔ن لیگ کی قیادت میں سے محمد زبیر اور رانا ثنا اللہ بھی موقع پر موجود تھے اور کارکنان کو روکتے رہے لیکن کسی نے ان کی بات نہیں مانی۔ ابتدائی اطلاعات کے مطابق ن لیگ کے پندرہ سے20 کارکنان نے نیب آفس میں داخل ہونے کی کوشش کی جن کو پولیس نے روکا۔پولیس کی جانب سے روکے جانے پر ن لیگی ورکرز نے ہٹ دھرمی دکھائی اور دھکم پیل بھی ہوئی۔

  پولیس نے ن لیگی کارکنان کو پیچھے دھکیلنے کیلئے آنسو گیس کا استعمال کیا۔اطلاعات ہیں کہ پولیس پر پھینکے جانے والے پتھر جاتی امرا سے گاڑی میں رکھ کر لائے گئے تھے۔ نمائندہ ہم نیوز نے بتایا کہ جہاں ہنگامہ آرائی ہوئی وہ بہت صاف ستھرا علاقہ ہے اور پتھروں کی دستیابی ممکن نہیں۔مسلم لیگ ن کی جانب کہا جا رہا ہے پولیس نے مریم نواز کی گاڑی پر پتھراؤ کیا ہے۔


ای پیپر