یوسف رضا گیلانی کی بطور اپوزیشن لیڈر سینٹ مستعفی ہونے کی پیشکش
سورس:   فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر
11 اپریل 2021 (20:28) 2021-04-11

اسلام آباد: پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے رہنماءاور سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے پیپلز پارٹی کی سینٹرل ایگزیکٹوکمیٹی (سی ای سی) کے اجلاس میں اپوزیشن لیڈر سینٹ سے مستعفی ہونے کی پیشکش کر دی۔ 

تفصیلات کے مطابق سی ای سی اجلاس میں یوسف رضا گیلانی نے پارٹی کو بطور اپوزیشن لیڈر سینٹ سے استعفیٰ دینے کی پیشکش کرتے ہوئے کہاکہ ہم نے جمہوریت کیلئے جانیں اور قربانیاں دیں ہیں، پیپلزپارٹی پر ایسے الزامات نہیں لگائے جا سکتے جن میں کوئی حقیقت نہ ہو۔

ذرائع کے مطابق سی ای سی نے متفقہ طور پر یوسف رضا گیلانی کے مستعفی ہونے کی تجویز مسترد کر دی جبکہ سابق صدر آصف علی زرداری اور بلاول بھٹو نے اس تجویزکی مخالفت کی۔سی ای سی کا کہنا تھا کہ اپوزیشن لیڈرسینیٹ پیپلز پارٹی کا عہدہ ہے اور اس بارے میں پارٹی ہی فیصلہ کرے گی۔

واضح رہے کہ بلاول ہاؤس کراچی میں پیپلزپارٹی کی سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے اجلاس میں دیگر امور سمیت پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم)کے شوکاز نوٹس کا معاملہ بھی بحث آیا 

ذرائع کے مطابق چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو نے شرکاءکو پی ڈی ایم کے سیکرٹری جنرل شاہد خاقان عباسی کا بھیجا گیا شوکاز نوٹس پڑھ کر سنایا اور اس کے بعد انہوں نے شوکاز نوٹس کوپھاڑ کر پھینک دیا جس پر سی ای سی کے شرکاءکی جانب سے تالیاں بھی بجائی گئیں۔ اس موقع پر بلاول کا کہنا تھا کہ ہم سیاست عزت کے لیےکرتے ہیں، عزت سے بڑھ کرکچھ نہیں۔

یاد رہے کہ اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) نے سینٹ میں اپوزیشن لیڈر کیلئے بلوچستان عوامی پارٹی (باپ) سے ووٹ مانگنے پر پیپلزپارٹی اور اے این پی کو شوکاز نوٹس جاری کئے تھے جس پر پی پی پی نے سخت ردعمل اور اے این پی نے اتحاد سے نکلنے کا اعلان کیا تھا۔

(بشکریہ: نیو نیوز)


ای پیپر