سانحہ ماڈل ٹاﺅن میں اہم پیش رفت
10 نومبر 2018 (19:58) 2018-11-10

لاہور: سپریم کورٹ آف پاکستان نے ماڈل ٹاون کیس میں شریف برادران کی طلبی سے متعلق ہائی کورٹ کے فیصلے کےخلاف اپیل سماعت کے لیے مقرر کردی ‘جسٹس گلزار احمد اور جسٹس فیصل عرب پر مشتمل عدالت عظمیٰ کا دو رکنی بینچ اپیل پر سماعت کرےگا جس کےلئے درخواست گزار سمیت تمام فریقین کو نوٹسز جاری کردیئے گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سانحہ ماڈل ٹاون کیس میں پاکستان عوامی تحریک نے لاہور ہائیکورٹ کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ میں نظر ثانی کی اپیل دائر کی تھی جسے آج سپریم کورٹ سے سماعت کے لیے مقرر کر لیا ہے۔سپریم کورٹ نے درخواست گزار سمیت تمام فریقین کو نوٹس جاری کر دئیے۔درخواست میں نواز شریف،شہباز شریف اور رانا ثناء اللہ کو طلب کرنے کی استدعا کی گئی تھی۔

درخواست میں موقف اپنایا گیا تھا کہ عدالت نے سانحہ ماڈل ٹاﺅن کیس میں مرکزی ملزمان کو طلب نہیں کیا تھا اس وجہ سے ان بیان بھی ریکارڈ نہیں گیا اور اس سے انصاف کے تقاضے پورے نہیں ہوتے۔2 رکنی بنچ جمعہ کے روز درخواست پر سماعت کرے گا۔خیال رہے عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر طاہر القادری نے لاہورہائیکورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کرنے کا اعلان کیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ سانحہ ماڈل ٹاو¿ن کیس کے فیصلے سے مطمئن نہیں، رانا ثناء اللہ اور شہبازشریف گولیاں نہیں چلائیں۔انہوں نے منصوبہ بندی کی تھی،سازش کرنے اورکرانے والے دونوں کی سزا موت ہے۔واضح رہے سا نحہ ماڈل ٹاو¿ن کیس میں عدالت نے نواز شریف ، شہباز شریف اور دیگر وزرا کو طلب کرنے کی درخواستیں مسترد کر دیں تھیں۔


ای پیپر