چوہدری برادران نے ایک بار پھر تبدیلی سرکار کو ٹف ٹائم دینے کا فیصلہ کرلیا
کیپشن:   فوٹو بشکریہ فیس بک
10 مارچ 2019 (11:22) 2019-03-10

لاہور: مسلم لیگ (ق) کے قائد چوہدری شجاعت نے مونس الہیٰ کو وفاقی کابینہ میں نہ شامل کرنے کے معاملے پر حکومت کو ٹف ٹائم دینے کا فیصلہ کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق چوہدری برادران کا کہنا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کی قیادت نے مونس الہیٰ کو وفاقی کابینہ میں شامل کرنے کا وعدہ کیا تھا لیکن ابھی تک حکومت اپنے وعدے پر عمل نہیں کر رہی، اگر وزیراعظم کی جانب سے اپنا وعدہ پورا نہ کیا گیا تو (ق) لیگ پنجاب حکومت سے عدم تعاون پر سوچے گی۔

واضح رہے کہ چودھری شجاعت اور نعیم الحق کی ملاقات میں فارمولہ طے کیا گیا تھا لیکن اس حوالے سے کوئی عملی اقدامات سامنے نہیں آسکے۔

یاد رہے کہ چوہدری پرویز الہی کی جانب سے حکومت پر دباو بڑھانے کے لیے 2 روز قبل پارٹی اجلاس بھی طلب کیا گیا تھا۔


ای پیپر