نیوزی لینڈ سے شکست ٗ بھارت ورلڈ کپ سے باہر
10 جولائی 2019 (19:58) 2019-07-10

مانچسٹر: بلیک کیپس نے سنسنی خیز مقابلے کے بعد بھارت کو 18 رنز سے شکست دے کر ورلڈ کپ کی دوڑ سے باہر کر دیا‘کیوی بائولرز نے بھارتی امیدوں پر اوس گرا دی ‘240 رنز کے ہدف کے تعاقب میں پوری بھارتی ٹیم 49.3 اوورز میں 221 رنز پر پویلین لوٹ گئی‘ رویندرا جدیجا ‘ دھونی کے درمیان 116 رنز کی شراکت کے باوجود بھارتی سورما ٹورنامنٹ سے آئوٹ ہو گئے ‘کیوی بائولرز ہنری کی 3 وکٹیں بھارتی تابوت میں آخری کیل ثابت ہوئیں‘ ٹرینٹ بولٹ اور سینٹینل کی 2,2 وکٹوں نے بھارتی خواب چکنا چور کر دئیے ‘ 37 رنز کے عوض 3 قیمتی وکٹس حاصل کرنے پر میٹ ہنری کو ورلڈ کپ کے سیمی فائنل کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق ورلڈ کپ کا پہلا سیمی فائنل مانچسٹر کے گرائونڈ پر بھارت اور نیوزی لینڈ کے درمیان کھیلا گیا ۔ بارش کے باعث منگل کو ہونے والے میچ کا بقیہ کھیل بدھ کے روز کھیلا گیا۔ منگل کو نیوزی لینڈ نے ٹاس جیت کر بیٹنگ کا فیصلہ کیا تو اننگز کا آغاز مارٹن گپٹل اور ہینری نکولس نے کیا تاہم مارٹن گپٹل صرف ایک رن بناکر آؤٹ ہوگئے، دوسری وکٹ پر کپتان ولیمسن نے نکولس نے محتاط بیٹنگ کرتے ہوئے اننگز کو آگے بڑھایا تو 69 کے مجموعے پر نکولس بولڈ ہوگئے، کپتان نے تجربہ کار راس ٹیلر کے ساتھ تیسری وکٹ پر 65 رنز جوڑ ے، اس دوران ولیمسن نے نصف سنچری اسکور کی تاہم وہ 134 کے مجموعی اسکور پر کیچ ا?ؤٹ ہوگئے، ولیمسن نے 95 گیندوں پر 67 رنز بنائے جس میں 6 چوکے بھی شامل تھے۔

نیوزی لینڈ کی چوتھی وکٹ 162 رنز پرجیمس نیشن کی صورت میں گری جو تجربہ کار راس ٹیلر کا ساتھ چھوڑ گئے، انہوں نے صرف 12 رنز بنائے جب کہ گرینڈ ہوم 16 رنز بنا کر کیچ آؤٹ ہوگئے تاہم 46 عشاریہ ایک اوورز میں تیز بارش کی وجہ سے میچ روک دیا گیا تھا، کیوی ٹیم نے 46 اعشاریہ ایک اوورز میں 5 وکٹوں پر 211 رنز بنائے تھے۔بدھ کو جب نیوزی لینڈ نے اپنی نامکمل اننگز 211 رنز 5 وکٹوں کے نقصان پر شروع کی تو صرف 15 رنز کے اضافے کے بعد راس ٹیلر رن آؤٹ ہوگئے جب کہ اگلی ہی گیند پر ٹام لیٹھم بھی کیچ آؤٹ ہوگئے۔آخری 4 اوورز میں نیوزی لینڈ کی ٹیم کچھ خاص کارکردگی کا مظاہرہ نہ کرسکی اور مقررہ 50 اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر صرف 239 رنز ہی بناسکی۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے راس ٹیلر نے 74 اور کپتان کین ولیمسن نے 67 رنز کی اننگز کھیلی۔ بھارتی کی جانب سے اننگز کا آغاز روہت شرما اور لوکیش راہول نے کیا تاہم بھارتی ٹاپ آرڈر نیوزی لینڈ کے بولرز کے سامنے بے بس دکھائی دیا اور صرف 5 رنز پر 3 بیٹسمین پولین لوٹ گئے، روہت شرما، لوکیش راہول اور ویرات کوہلی نے صرف ایک ایک رن بنایا اور آؤٹ ہوگئے۔24 رنز پر 4 کھلاڑی آؤٹ ہونے کے بعد رشپ پنٹ اور ہاردیک پانڈیا نے ٹیم کا اسکور آگے بڑھایا، دونوں کے درمیان 47 رنز کی شراکت قائم ہوئی تاہم رشپ پنٹ 32 رنز بناکر آؤٹ ہوگئے۔ بھارت کو چھٹا نقصان 92 کے مجموعی سکور پر اس وقت اٹھانا پڑا جب ہارڈیک پانڈیا 32 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے۔

اس موقع پر آل ٹائم گریٹ مہندرا سنگھ دھونی اور رویندرا جدیجہ نے ٹیم کی گرتی ہوئی دیوار کو سہارا دیا اور دھونی نے محتاط جبکہ جدیجہ نے جارحانہ انداز اختیار کیا۔ جدیجہ نے 59 گیندوں پر 77 رنز کی اننگز کھیلی جس میں 4 چھکے اور 4 چوکے شامل تھے۔ دونوں کھلاڑیوں کے درمیان 116 رنز کی شراکت داری اس وقت اپنے اختتام کو پہنچی جب 47.5 اوورز پر رویندرا جدیجہ 77 رنز کی اننگز کھیل کر ٹرینٹ بولٹ کی گیند پر کپتان ولیمن سن کے ہاتھو ںکیچ آئوٹ ہو گئے۔ دھونی کریز پر موجود تھے کہ 216 رنز پر آخری امید دھونی بھی 2 رنز لینے کی کوشش میں مارٹن گپٹل کی ڈائریکٹ تھرو لگنے سے آئوٹ ہو گئے۔ بھارت کی نویں وکٹ 217 اور آخری وکٹ 221پر گری ۔ یوں بلیک کیپس نے ورلڈ کپ کے فائنل کیلئے کوالیفائی کر لیا۔

نیوزی لینڈ (کل ) جمعرات کو انگلینڈ اور آسٹریلیا کے درمیان دوسرے سیمی فائنل کے فاتح کیخلاف14 جولائی ہفتہ کے روز مدمقابل ہو گا۔واضح رہے کہ ٹورنامنٹ رولز کے مطابق دونوں سیمی فائنلز اور فائنل کے لئے ریزرو ڈے رکھا گیا تھا ، میچ مکمل نہ ہونے پر اگلے روز بقیہ میچ مکمل کیا جائے گا جب کہ بارش کی وجہ سے دوسرے دن میچ ٹونٹی اوورز تک محدود کیا جا سکتا تھا۔


ای پیپر