2050 میں پاکستانی دنیا کی بڑی معیشتوں میں شامل ہو جائیگا : شاہد خاقان عباسی
10 اپریل 2018 (13:14)

سان یان: وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ چوتھا صنعتی انقلاب دستک دے رہا ہے، پتھر ہٹانے اور پہاڑ ہلانے کا وقت آچکا، پاکستان کی شرح نمو سالانہ 6 فیصد کے حساب سے ترقی کر رہی ہے، 2050 میں پاکستان دنیا کی بڑی معیشتوں میں شامل ہو جائیگا ،سی پیک روڈ اینڈ بیلٹ کا فلیگ شپ منصوبہ اور باہمی تعاون اور بے مثال ترقی کا شاندار نمونہ ہے،گوادر بندرگاہ عالمی تجارتی مرکز بننے والی ہے، اس سے ترقی کے نئے دور کا آغاز ہوگا۔


چین میں منعقدہ با فورم کے سالانہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے شی جن پنگ کو دوبارہ صدر بننے پر مبارکبا د دی اور چینی حکومت کی والہانہ مہمان نوازی پر شکریہ ادا کیا۔وزیر اعظم نے پاک چین تعلقات کے حوالیسے کہا کہ پاک چین تعلقات کی حالیہ تاریخ میں نظیر نہیں ملتی، پاک چین تعلقات بے مثال ہیں، چین عالمی تجارت میں اہم کردار ادا کررہا ہے، امید ہے چین شی جن پنگ کی زیر قیادت ترقی کی نئی منازل طے کرے گا۔


انہوں نے کہا کہ پاکستان دنیا بھر کے سرمایہ کاروں کے لیے شاندار مواقع پیش کرتا ہے، علی بابا کمپنی بھی پاکستان میں بڑی سرمایہ کاری کی خواہش مند ہے، مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کو سامنے لانے میں اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل اپنا کردار ادا کریں ایل او سی اور ورکنگ بائونڈری پر بھارتی فائرنگ سے نہتے شہری شہید ہورہے ہیں‘ پاکستان دہشت گردی کے خلاف عدم برداشت کی پالیسی پر عمل پیرا ہے‘ پاکستان نے اپنی سرزمین سے دہشت گرد عناصر کے خاتمے میں نمایاں کامیابی حاصل کی ‘ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنر ل انٹونیو گٹرس نے کہا کہ پاکستان کی اقوام متحدہ امن آپریشنز میں معاونت قابل تعریف ہے ‘ مسئلہ کشمیر پر سنجیدہ مذاکرات کی ضرورت پر زور دیتے ہیں۔


ای پیپر