اپنا وطن کسی کے حوالے نہیں کریں گے : افغان طالبان
09 ستمبر 2019 (16:43) 2019-09-09

کابل:امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کے بیان کے بعد افغان طالبان نے بھی دوبارہ بات چیت کرنے کا عندیہ دے دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق افغان طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ جنگ ہم پر مسلط کی گئی ہے، اگر جنگ کی جگہ افہام وتفہیم کا راستہ اپنایا جائے تو ہم آخر تک اس کیلئے تیار ہوں گے اور امریکا سے سمجھوتے کی پوزیشن میں واپس آنے کی توقع کرتے ہیں۔ افغان طالبان کے ترجمان نے واضح کیا کہ اٹھارہ سال کی جدوجہد نے امریکا پر واضح کردیا ہم اپنا وطن کسی کے والے نہیں کریں گے۔

ترجمان افغان طالبان کے مطابق امریکی ٹیم کے ساتھ مذاکرات مفید رہے اور معاہدہ مکمل ہوچکا ہے، فریقین معاہدہ کے اعلان اور دستخط کی تیاریوں میں مصروف تھے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے مذاکراتی سلسلے کو منسوخ کرنے کا اعلان کیا۔انہوں نے کہا کہ امن مذاکرات کی منسوخی کا سب سے زیادہ نقصان امریکا کو ہی پہنچے گا، اس کا اعتماد اور ساکھ بھی متاثر ہوگی، امریکا کا امن مخالف رویہ واضح ہوکر دنیا کے سامنے آگیا ہے۔


ای پیپر