ہماری حکومت ہی معیشت کو دلدل سے نکالے گی :وزیر اعظم عمران خان
09 اکتوبر 2018 (21:40) 2018-10-09

اسلام آباد:وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت اعلیٰ سطح کا مشاورتی اجلاس ہوا جس میں وفاقی وزراء‘ پارٹی رہنماوں اور معاشی ماہرین نے شرکت کی۔اجلاس میں حکومت کو درپیش معاشی چیلنجز کی نئی حکمت عملی پر غور کیا گیا۔

وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ عوام کو ریلیف دینا چاہتے ہیں اور یہ واحد حکومت ہوگی جو معیشت کو دلدل سے نکالے گی،عمران خان کی زیر صدارت سینئرپارٹی رہنماو¿ں کا اہم اجلاس منعقد ہوا جس میں شاہ محمود قریشی، پرویز خٹک، شفقت محمود، شیریں مزاری، اعظم سواتی، شبلی فراز، علی محمد خان اور عثمان ڈار سمیت دیگرنے شرکت کی۔

معاشی ماہرین کی جانب سے حکومت کو معیشت کی بہتری کے آپشنز پر بریفنگ دی گئی۔ ذرائع کا بتانا ہے کہ معاشی ماہرین نے حکومت کو مشورہ دیا کہ کم عرصہ کے لیے آئی ایم ایف پروگرام لےکر حکومتی اخراجات کم کیے جائیں۔ ذرائع کا بتانا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے معاشی حکمت عملی پر عوام کو تمام پہلوئوں پر اعتماد میں لینے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ سابقہ حکومت کی غلط پالیسیوں کے منفی نتائج سے عوام کو آگاہ کیا جائے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اجلاس میں نئی معاشی پالیسی اور حکمت عملی پر پارلیمنٹ کو بھی اعتماد میں لینے کا فیصلہ کیا گیا۔ وزیر اعظم نے اجلاس میں حکومتی4 میڈیا ٹیم کی غیر موثر کارکردگی پر ناپسندیدگی کا اظہار بھی کیا۔وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ نئی حکومت کے چیلنجز ماضی کی حکومتوں سے کہیں سے زیادہ ہیں اور چیلنجز سے نمٹنے کے لیے مشکل فیصلے کرنے پڑ رہے ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم نے خود بھی ہر فورم پر حکومتی معاشی اصلاحات پر نکتہ نظر دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیر اعظم نے مزید کہا کہ عوام کو ہر معاملے پر اعتماد میں لیں ہم عوام کو ریلیف دینا چاہتے ہیں اور یہ واحد حکومت ہوگی جو معیشت کو دلدل سے نکالے گی۔


ای پیپر