مولانا عبدالغفور حیدری نے ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کے عہدے کی پیشکش کی تردید کر دی
سورس:   فائل فوٹو
09 مارچ 2021 (17:51) 2021-03-09

اسلام آباد: جمعیت علمائے اسلام کے مرکزی سیکرٹری جنرل مولانا عبدالغفور حیدری نے حکومت کی جانب سے ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کے عہدے کی پیشکش کی تردید کر دی۔

مولا عبدالغفور حیدری کا کہنا تھاکہ چیئرمین سینٹ کے پاس تمام پارٹیوں کے ممبران بیٹھے تھے، میٹنگ کے دوران کوئی گفتگو نہیں ہوئی اور میٹنگ کے بعد پرویز خٹک نے گفتگو میڈیا کے سامنے کی۔ حکومتی وزیرکی میڈیا کے سامنے اس طرح کی گفتگو کی شدید الفاظ میں مذمت کرتا ہوں۔

عبدالغفور حیدری کا کہنا تھا کہ جس حکومت کو اپوزیشن تسلیم نہیں کرتی اس حکومت کی آفر کی کوئی حیثیت نہیں اور پی ڈی ایم نے جو فیصلہ کیا ہے ہم اس کے پابند ہیں اور پی ڈی ایم مکمل طور پر متحد اور متفق ہے۔

جے یو آئی رہنما کا کہنا تھا کہ حکومتی وزیر اپنی ڈوبتی کشتی بچانے کیلئے تاخیری حربے استعمال کر رہے ہیں۔

خیال رہے کہ وزیر دفاع پرویز خٹک نے میڈیا سے گفتگو میں کہا ہے کہ ہم نے مولانا عبدالغفور حیدری کو آفر کی ہے کہ ہمارے ڈپٹی چیئرمین سینیٹ بن جائیں۔ وہیں اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) نے جمعیت علمائے اسلام کے مرکزی رہنما مولانا عبدالغفور حیدری کو ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کے عہدے کیلئے نامزد کیا ہے۔


ای پیپر