Foreigners who do not obtain a visa can re-apply, the State Department said
کیپشن:   فائل فوٹو
09 مارچ 2021 (11:23) 2021-03-09

واشنگٹن: امریکی محکمہ خارجہ کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ ایسے غیر ملکی افراد جو ان 13 ممالک سے تعلق رکھتے ہیں جنھیں پابندی کی وجہ سے ویزا دینے سے انکار کر دیا گیا تھا، وہ اب دوبارہ اپلائی کر سکتے ہیں۔

خیال رہے کہ سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے جن افریقی اور مسلمان ممالک پر سفری پابندیاں عائد کی تھیں ان میں یمن، ونیزویلا، تنزانیہ، شام، سوڈان، صومالیہ، شمالی کوریا، نائیجیریا، لیبیا، کرغزستان، ایران، اریٹیریا اور میانمار شامل تھے۔

امریکی محکمہ خارجہ کی جانب سے ان افراد کو دوبارہ فیس کیساتھ نئی درخواست دینے کی ترغیب دی گئی ہے۔ خیال رہے کہ سابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے دور حکومت میں 13 مسلمان اور افریقی ممالک کے شہریوں پر ویزے کی پابندی عائد کر دی گئی تھی۔

اب امریکی حکام کا کہنا ہے کہ ایسے ممالک کے شہری اپنی مسترد کی گئی درخواستوں پر نظر ثانی کی درخواست دے سکتے ہیں۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ 20 جنوری 2020ء سے قبل ویزوں کے حصول کیلئے اپنی دستاویزات جمع کرانے والے افراد دوبارہ سے اپلائی کریں۔

خیال رہے کہ امریکی صدر جوزف بائیڈن نے اقتدار سنبھالتے ہی ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے مسلمان ممالک پر عائد کردہ سفری پابندیوں کو کالعدم قرار دے دیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ سابق امریکی صدر کے اس اقدام سے امریکا کے وقار کو دھبہ لگا تھا۔

بیان میں واضح کیا گیا ہے کہ ایسے تمام افراد جن کو لاٹری سسٹم کے تحت ویزا نہیں ملا وہ انھیں دوبارہ ویزا نہیں دیا جائے گا۔

خیال رہے کہ امریکا کی ویزا لاٹری نظام کے تحت صرف ایسے ممالک کو ترجیح دی جاتی ہے جن کو ویزے کیلئے ترجیح نہیں دی جاتی۔


ای پیپر