Fazal-ur-Rehman, Akhtar Mengal, nomination, unanimous candidate, Deputy Chairman Senate
09 مارچ 2021 (08:21) 2021-03-09

اسلام آباد: پی ڈی ایم کے سربراہی اجلاس میں ڈپٹی چیئرمین سینٹ کے مشترکہ امیدوار کے نام پر اتفاق کیوں نہ ہو سکا ؟ نیو نیوز نے پتہ چلا لیا ۔

ڈپٹی چیئرمین سینٹ کے متفقہ امیدوار کی نامزدگی پر مولانا اور اختر مینگل آمنے سامنے ، اخترمینگل نے اپوزیشن جماعتوں سے صاف کہ دیا کہ حکومت چھوڑ کر آئے ہیں ہمارا حق زیادہ ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جے یو آئی کے پاس ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کا عہدہ پہلے بھی رہ چکا ہے اب موقع بی این پی مینگل کو دیا جائے ۔

دوسری جانب مولانا فضل الرحمان مولانا عبدالغفور حیدری کو متفقہ امیدوار نامزد کرانا چاہتے ہیں ۔

واضح رہے کہ پی ڈی ایم کے سربراہی اجلاس میں اویس نورانی اور قمر زمان کائرہ کے درمیان تلخ کلامی ہوئی ۔ اویس نورانی نے پوچھا صدر کے انتخاب میں اپوزیشن جماعتوں نے فضل الرحمان نے سپورٹ کیوں نہیں کیا جس پر قمر زمان کائرہ نے کہا کہ صدر کے انتخاب کا معاملہ پی ڈی ایم بننے سے پہلے کا ہے ۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق فضل الرحمان اور شاہد خاقان عباسی نے دونوں کو خاموش کروایا ۔ اس موقع پر سربراہ پی ڈی ایم نے کہا کہ ہمیں حکومت پر دباؤ بڑھانے کیلئے استعفے دینے چاہیے کیونکہ استعفے بھی جمہوری عمل ہے ۔


ای پیپر