ترکی نے 600 غیر قانونی افغان مہاجرین کو افغانستان بھیج دیا
09 اپریل 2018 (18:48)


استنبول: ترکی نے600سے زائدغیر قانونی افغان مہاجرین کو خصوصی طیارے کے ذریعے افغانستان بھیجنا شروع کردیا۔


تفصیلات کے مطابق ترکی کے مقامی میڈیا نے بتایا کہ گزشتہ روز 227 افغان مہاجرین کو خصوصی طیارے سے کابل روانہ کردیا گیا تاہم مجموعی طور پر رواں ہفتے کل 691 افغان مہاجرین کو مزید دو پروازوں کے ذریعے بھیجا جائے گا۔ ترکی تقریباً 3 ہزار غیرقانون افغان مہاجرین کو واپس بھیجنے کا ارادہ رکھتا ہے جو ارزورم نامی شہر میں رہائش پذیر ہیں۔ افغانستان آ نے والے افغان باشندے ‘زبردستی’ نہیں بھیجے جارہے بلکہ وہ اپنی مرضی سے وطن پہنچ رہے ہیں۔


وزرات برائے پناہ گزین کے ترجمان اسلام الدین جرات نے کہاکہ ‘متعدد افغان باشندے اپنی مرضی سے ملک واپس آرہے ہیں’۔ان کا مزید کہنا تھا کہ ‘واپس آ نے والے تمام افغان باشندے یورپ جانے کے لیے ترکی گئے تھے تاہم ناکامی کے باعث خود ہی آرہے ہیں’۔ افغانستان سمیت دیگر ایشیائی مملک سے یورپ داخل ہونے کے خواہش مند تارکین وطن کے لیے ترکی بہترین ٹھکانہ سمجھا جاتا ہے۔لاکھوں کی تعداد میں مہاجرین اور تارکین وطن 2015 میں یورپ داخل ہوئے تاہم 2016 میں ترکی اور یورپ کے مابین معاہدے کے بعد غیرقانونی تارکین کی حوصلہ شکنی کی گئی۔


ای پیپر