چیئرمین سینٹ کیلئے مسلم لیگ ن نے میر حاصل بزنجو کا نام فائنل کر دیا
08 مارچ 2018 (15:37) 2018-03-08

اسلام آباد:سینیٹ الیکشن کے حوالے سے مسلم لیگ ن کا اہم مشاورتی اجلاس ہو ا جس میں مسلم لیگ نے بڑی کامیابی حاصل کرنے کا دعویٰ کیا ہے ۔ ن لیگ کے اجلاس میں 58ووٹ حاصل کرنے کا دعوی بھی کیا گیا ہے ۔ میر حاصل بزنجو کے نام پر تمام اتحادی جماعتوں نے اتفاق کر لیا ہے ۔اس سلسلے میں ملاقاتیں جاری ہیں اور ایم کیو ایم سے بھی رابطہ کیا جائے گا ۔خواجہ آصف نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا گزشتہ روز زرداری صاحب کے رویے سے ہمیں شکایت ہے ۔نواز شریف نے رضا ربانی کا نام خلوص نیت سے دیا تھا ۔

مسلم لیگ ( ن ) کی کمیٹی نے چیئرمین و ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کے لیے پارٹی کے نامزد کردہ امیدواروں کی کامیابی کا دعویٰ کردیا ہے۔پنجاب ہاو¿س اسلام آباد میں مسلم لیگ ( ن ) کے قائد نواز شریف کی سربراہی میں پارٹی کا مشاورتی اجلاس جاری ہے، جس میں پارٹی کی 4 رکنی کمیٹی نے اپنی رپورٹ پیش کردی۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اکثر جماعتیں چیئرمین سینیٹ کے لیے نواز شریف کی تجویز کی حامی ہیں اور انہوں نے چیئرمین سینیٹ کے لیے تعاون کا یقین دلایا ہے۔ مسلم لیگ ( ن ) کو سینیٹ میں مطلوبہ اکثریت حاصل ہو گئی ہے، اب مسلم لیگ ( ن ) باآسانی اپنا چیئرمین منتخب کرانے کی پوزیشن میں ہے۔


نواز شریف نے کمیشن کی رپورٹ پر اظہارِ اطمینان جب کہ آصف زرداری کی جانب سے رضا ربانی کا نام مسترد کرنے پر مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہم جمہوریت کو مستحکم اور پارلیمان کو بالادست دیکھنا چاہتے ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ رپورٹ کی روشنی میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ چیئرمین سینیٹ کا تعلق مسلم لیگ ( ن ) جب کہ ڈپٹی چیئرمین کا تعلق اتحادی جماعت سے ہوگا۔ مشاورتی اجلاس میں چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کے ناموں پر مشاورت کی جارہی ہے۔واضح رہے کہ گزشتہ روز نواز شریف نے عندیہ دیا تھا کہ اگر پیپلز پارٹی رضا ربانی کو چیئرمین سینیٹ نامزد کرے تو ان کی حمایت کریں گے لیکن آصف زرداری نے یہ تجویز مسترد کردی تھی۔


ای پیپر