چینی وفد نے حکومت کو کتنے ہفتے لاک ڈائون بڑھانے کا کہہ دیا ،بڑی خبر آگئی
08 اپریل 2020 (18:52) 2020-04-08

کراچی:پاکستان جو اس وقت کرونا جیسی خطرناک بیماری سے لڑ رہا ہے ،وفاقی حکومت نے جہاں 14 اپریل تک لاک ڈائون میں توسیع کی تھی وہیں چینی وفد نے حکومت سندھ کو تجویز دی ہے کہ اگر وہ اس وبا کو روکنا چاہتے ہیں تو لاک ڈائون کر دورانیہ بڑھا کر 8 ہفتے کردیں جس سے امید ہے آپ بہتر نتائج حاصل کر سکیں گے ۔

وزیراعلی سندھ سے چین کے میڈیکل سیکٹر کے 9رکنی اعلی سطحی وفد نے بدھ کووزیراعلیٰ ہاؤس کراچی میں ملاقات کی،جس میں وزیر صحت ڈاکٹر عذرہ پیچوہو سمیت دیگر نے شرکت کی،اس موقع پر مراد علی شاہ نے کہا کہ چین نے کورونا وائرس پر قابو پایا، جانی نقصان پر افسوس ہے، ہمیں کورونا وائرس پر قابو پانے کیلئے آپ کی رہنمائی کی ضرورت ہے، ہم اپنی ٹیسٹنگ کی ریشو بڑھا رہے ہیں، ہمیں آپ سے ریپڈ ٹیسٹنگ مشینری اور کٹس چاہئیں، ہمارے بہت ہی محدود وسائل ہیں، ہم 2040 ٹیسٹ یومیہ کر سکتے ہیں۔ چینی وفد نے کہا کہ چین کی حکومت سندھ حکومت کے ساتھ ہر قسم کی مدد کرنا چاہتی ہے۔

چینی وفد نے عوام کو قیمتی مشورے دیتے ہوئے کہا گھروں کی کھڑکیاں کھول کر قدرتی ہوا لیں۔ اس موقع پر وزیراعلی سندھ نے کہا بغیر علامت کے بھی کورونا وائرس کے مریض ظاہر ہوئے ہیں، جس پر چینی میڈیکل ٹیم نے کہاکہ ایسے مریضوں کا بھی آئیسولیشن میں رہنا ضروری ہے۔

راشن کی تقسیم میں بھی ہجوم نہیں ہونا چاہئے، نظم وضبط کا مظاہرہ کرنا ہے۔ چینی وفد نے مشورہ دیا کہ اگر کرونا وائرس کے خلاف بہتر نتائج حاصل کرنے ہیں تو لاک ڈاؤن کا دورانیہ بڑھایا جائے۔ وفد کے اراکین نے کہا کہ کچھ علاقوں میں لاک ڈاؤن آٹھ ہفتے تک رکھنے سے خاطر خواہ نتائج ملیں گے۔


ای پیپر