Bilawal, Maryam, yesterday, conversation, literate, Shibli Faraz
07 مارچ 2021 (16:05) 2021-03-07

اسلام آباد: وزیراطلاعات شبلی فراز نے کہا ہے کہ بلاول بھٹو اور مریم نواز نے کل جو گفتگو کی اس سے نہیں لگتا وہ پڑھے لکھے ہیں ، بلاول بھٹو وہی زبان استعمال کر رہے تھے جو رانا ثنا اللہ استعمال کرتے ہیں ۔

پریس کانفرنس کرتے ہوئے شبلی فراز نے کہا کہ وزیراعظم کے اعتماد کے ووٹ کے بعد انہیں مزید حوصلہ ملا ہے ۔ تحریک انصاف جمہوری اقدار پر یقین رکھتی ہے اس لیے عمران خان نے ضروری سمجھا وہ پارلیمنٹ کے پاس جائیں اور اعتماد کا دوبارہ ووٹ لیں ۔ انہوں نے کہا کہ پی ڈی ایم نے ملک کی اخلاقیادت کو تباہ و برباد کیا ، یہ وہ قوتیں ہیں جو پاکستان میں مفادات اور پیسے کی سیاست کرتی ہیں ۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ ان کی سیاست 1985 سے نان پارٹی الیکشن سے اب تک جاری ہے ، انہوں نے سیاست میں مفادات ، رشوت اور پیسے سے ہر کام کیا ۔ اس گروہ نے پاکستان کے ہر ادارے کو تباہ کر دیا ۔

شبلی فراز نے کہا کہ سابق حکومتوں کی ناقص پالیسیوں اور لوٹ مار سے ملک میں بدحالی ہوئی ، یہ جماعتیں کیسے اپنے مفادات کیخلاف قانون سازی کرسکتی ہیں ۔ ان کی اربوں روپے کی جائیدادیں یورپ سمیت دیگر ممالک میں موجود ہیں ۔ یہ سیاست میں آئے اور انہی لوگوں کو لے آئے جو ان جیسے تھے ۔ انہوں نے برسر اقتدار آکر سیاسی مفادات اٹھائے ۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ پی ٹی آئی ملک میں قانون کی حکمرانی اور خوشحالی چاہتی ہے ، تحریک انصاف نے اصول اور اخلاقیات کی سیاست سے اپنی مقبولیت بڑھائی ، جب ملک میں قانون کی حکمرانی نہیں ہوگی ملک ترقی نہیں کرسکتا ۔ کیا وجہ ہے پیپلز پارٹی جو چاروں صوبوں میں تھی آج ایک صوبے تک محدود ہے ، مسلم لیگ (ن) بھی آج صرف ایک صوبے کی حد تک محدود ہے ۔ پی ٹی آئی اس وقت چاروں صوبوں میں موجود ہے اور مقبول جماعت ہے ۔

انہوں نے کہا کہ اپوزیشن جماعتوں کا بیانیہ تبدیل ہوتا رہتا ہے ، انہیں جو پسند ہو وہی بیانیہ اپناتے ہیں جو ناپسند ہو اسے رد کرتے ہیں ۔

شبلی فراز نے کہا کہ پی ڈی ایم کی کل کی پریس کانفرنس ہارے ہوئے جواری کی طرح تھی ، یوسف رضا گیلانی کے بیٹے ووٹ کو مسترد کرنے کا طریقہ بتا رہے تھے ، جو انسان جس کام کا ماہر ہوتا ہے وہی طریقہ بتاتا ہے ۔ ان کی ڈھٹائی یہ ہے کھلم کھلا میڈیا پر آکر اعتراف جرم بھی کیا ۔


ای پیپر