داعش پاکستان میں کیا کر رہی ہے ؟: گرفتار دہشت گرد کے انکشافات
07 مارچ 2018 (16:31) 2018-03-07


کراچی: وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) کے انسداد دہشت گردی ونگ کے ہاتھوں گرفتار دہشت گرد سیف الاسلام خلافتی نے انکشاف کیا ہے کہ داعش کا سوشل میڈیا نیٹ ورک پاکستان میں مضبوط کیا جارہا ہے ۔


تفصیلات کے مطابق دہشت گرد سیف الاسلام خلافتی نے ابتدائی تفتیش کے دوران انکشاف کیا ہے کہ داعش کا نیٹ ورک پاک افغان سرحد کے قریب کسی نامعلوم مقام سے چلایا جارہا ہے اور اسے بابا جانی نامی دہشت گرد چلا رہا ہے ۔ دہشت گرد نے انکشاف کیا ہے انہیں گرفتاری سے بچانے کے لیے خاص سافٹ ویئر بناکر دیا گیا تھا اور اس سافٹ ویئر کی وجہ سے وہ خود کو محفوظ تصور کر رہے تھے۔


ایف آئی اے کے ذرائع نے مزید بتایا کہ گرفتار دہشت گرد کے قبضے سے تشدد اور قتل کی کچھ ویڈیوز بھی ملی ہیں جنہیں سوشل میڈیا پر گرفتار دہشت گرد نے اپلوڈ کرنا تھا۔گرفتار دہشت گرد کا آبائی تعلق بلوچستان کے ضلع ژوب سے ہے اور اس کے انکشافات کے بعد تحقیقات کا دائرہ خیبرپختونخواہ اور بلوچستان تک بڑھا دیا گیا ہے ۔ذرائع کے مطابق کراچی میں دہشت گردوں کے ملنے کا مرکز کٹی پہاڑی کے قریب تھا جب کہ پہلے گرفتار ملزم ایک اور کالعدم تنظیم کے لیے کام کرتا تھا اور اسے اور اس سے پہلے گرفتار خلیل الرحمان کو سوشل میڈیا کی جانب مولوی نور محمد نامی شخص لایا تھا۔


ای پیپر