فوٹوبشکریہ فیس بک

عمران خان ہیلی کاپٹر کیس میں نیب خیبر پختونخوا میں پیش، سوالنامہ دیدیا گیا
07 اگست 2018 (16:10) 2018-08-07

پشاور: ہیلی کاپٹر کیس میں پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان آج پشاور میں نیب خیبرپختونخوا کے دفتر میں پیش ہوئے، جہاں وہ ایک گھنٹہ اور 10 منٹ تک موجود رہے۔

تفصیلات کے مطابق ہیلی کاپٹر کیس میں پی ٹی آئی چیئرمین اور متوقع وزیراعظم عمران خان نیب کے سامنے پیش ہوگئے جہاں پر نیب کی ٹیم نے عمران خان سے 35 سے 40 منٹ تک کانفرنس روم میں سوالات کیے اور انہیں ایک سوالنامہ بھی دیا گیا، جس کا جواب 15 روز میں دینا لازمی ہے۔

نیب ہیڈکوارٹر آمد کے موقع پر سابق وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک اور سابق اسپیکر خیبرپختونخوا اسمبلی اسد قیصر بھی پی ٹی آئی چیئرمین کے ہمراہ تھے۔

خیال رہے کہ نیب خیبر پختونخوا نے 3 اگست کو عمران خان کو صوبائی حکومت کا سرکاری ہیلی کاپٹر استعمال کرنے کے الزام میں آج طلب کیا تھا۔

اس کیس کے سلسلے میں سابق وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا پرویز خٹک اور ایوی ایشن حکام سے بیانات پہلے ہی قلمبند کیے جاچکے ہیں۔ یاد رہے کہ

چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان بغیر پروٹوکول کے نیب میں پیشی کے بعد پارلیمانی اجلاس میں شرکت کے لیے نکلے تو پرویز خٹک گاڑ ی ڈرائیو کرتے رہے۔

عمران خان بغیر پروٹوکول کے پی ٹی آئی خیبرپختونخوا کی پارلیمانی پارٹی کے اجلاس میں پہنچے، دوران سفرپرویزخٹک اور عمران کے درمیان ،پروٹوکول کے معاملے پر دلچسپ مکاملہ بھی ہوا۔

خیبرپختونخوا کی پارلیمانی پارٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ ماضی میں جو لوگ اقتدار میں آ ئے ہیں اپنے ذات کیلئے سب کچھ کیا، ہم اقتدار کے مزے لوٹنے نہیں، جہاد کرنے آئے ہیں۔ محنت ہی سے انسان کامیابی حاصل کرتا ہے، میری جدوجہد واضح مثال ہے۔ کمیٹی بنائے گے تاکہ وزیراعظم، صدر اور وزیروں کے خرچے کم کرسکیں۔


ای پیپر