فوج کو بدنام کرنے والے افراد کو جرمانے اور سزائیں دینے سے متعلق مسودہ قانون منظور
سورس:   فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر
07 اپریل 2021 (20:35) 2021-04-07

اسلام آباد: قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے داخلہ نے فوج کو بدنام کرنے والے افراد کو جرمانے اور سزائیں دینے سے متعلق مسودہ قانون کی منظوری دیدی ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق قائمہ کمیٹی برائے داخلہ میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رکن امجد علی خان نے گزشتہ برس ’کریمنل لا ایکٹ بل 2020ئ‘ پیش کیا تھا جسے اب منظور کرلیا گیا ہے اور اس بل کے تحت مسلح افواج یا ان کے کسی رکن کو بدنام کرنے والے شخص کو دو سال قید یا پانچ لاکھ روپے تک جرمانہ کیا جا سکے گا۔ 

قائمہ کمیٹی برائے داخلہ میں یہ بل منظوری کیلئے پیش کیا گیا تو ووٹنگ کے دوران پاکستان مسلم لیگ (ن) اور پاکستان پیپلز پارٹی نے مخالفت کی جس پر ووٹ برابر ہوگئے تاہم چیئرمین قائمہ کمیٹی برائے داخلہ راجہ خرم نواز نے اپنا ووٹ کا حق استعمال کیا جس کے بعد یہ مسودہ قانون منظور ہو گیا۔ 

بل کے ذریعے تعزیرات پاکستان کے سیکشن 500 میں ایک اور شق کا اضافہ کرتے ہوئے یہ تجویز دی گئی ہے کہ جو کوئی بھی جان بوجھ کر پاکستان کی مسلح افواج یا ان کے کسی رکن کا تمسخر اڑاتا ہے، عزت کو گزند پہنچاتا ہے یا بدنام کرتا ہے وہ ایسے جرم کا قصوروار ہو گا جس کیلئے دو سال تک قید کی سزا یا پانچ لاکھ روپے تک جرمانہ یا دونوں سزائیں ہو سکتی ہیں۔

(بشکریہ: نیو نیوز)


ای پیپر