PM Imran Khan,Shah Mehmood Qureshi,Jahangir Tareen
07 اپریل 2021 (15:38) 2021-04-07

لاہور : پنجاب حکومت نے پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی) کے سینئر رہنما جہانگیر ترین کی حمایت کرنے والے قومی و صوبائی اسمبلی کے اراکین کی فہرست تیار کر لی ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ پنجاب بہت جلد وزیر اعظم عمران خان کے سامنے وہ فہرست پیش کرنے جا رہے ہیں جن اراکین کے جہانگیر ترین سے رابطے ہیں ،نجی ٹی وی کے مطابق اس سلسلے میں عثمان بزدار آج اسلام آباد میں عمران خان سے اہم ملاقات کرینگے ،جس میں ایسے تمام اراکین اسمبلی کی فہرست پیش کی جائے گی جو بیک ڈور جہانگیر ترین کیساتھ معاملات طے کر رہے ہیں ۔

دوسری طرف ذرائع کے مطابق وزیر اعظم عمران خان ایسے تمام اراکین اسمبلی سے متعلق فیصلہ کرینگے جن کا بیک ڈور جہانگیر ترین کیساتھ رابطہ ہے ،یا د رہے جہانگیر ترین کے ساتھ بینکنگ کورٹ آنے والے پی ٹی آئی کے ایم این اے راجہ ریاض نے کہا تھاکہ وزیراعظم کے اعتماد کا ووٹ لینے میں اہم کردار جہانگیر ترین کا ہے، وزیراعظم اپنے بہترین اور جان نثار دوست کے خلاف زیادتی بند کرائیں۔

ایم این اے راجہ ریاض نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ پنجاب حکومت میں جہانگیر ترین کا اہم کردار رہا ہے اس لئے اگر حالات خراب ہوئے تو سب سے زیادہ نقصان تحریک انصاف پنجاب کا ہی ہوگا ۔

واضح رہے اس سے قبل جہانگیر ترین کا کہنا تھا کہ میری تحریک انصاف سے راہیں جدا نہیں ہوئیں ، میں دوست تھا، مجھے دشمنی کی طرف کیوں کھیل رہے ہیں؟ جہانگیر ترین کا کہنا تھا کہ مجھ پر ایک نہیں بلکہ دو تین مقدمات درج کئے گئے ہیں۔ ہمارے لئے افسوس کا مقام ہے کہ ہم تحریک انصاف سے ہی انصاف مانگ رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ میری وفاداری کا امتحان لیا جا رہا ہے۔  ایک سال سے مجھ پر یہ شوگر کمیشن چل رہا ہے لیکن اس کے باوجود میری تحریک انصاف سے راہیں جدا نہیں ہوئی ہیں۔ میں پاکستان تحریک انصاف میں شامل ہوں اور  رہوں گا۔

جہانگیر ترین نے کہا کہ انتقامی کارروائی جو بھی کر رہا ہے، وقت آگیا ہے اسے بے نقاب کیا جائے۔میرے  اکاؤنٹ کیوں منجمد کی گئے؟ اس سے فائدہ کون حاصل کر رہا ہے؟ میرے خلاف ظلم بڑھتا جا رہا ہے۔ ایک سال سے انکوائری چل رہی ہے لیکن میں چپ کر کے بیٹھا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ میں پوچھتا ہوں آخر یہ انتقامی کارروائی کیوں ہورہی ہے، وجہ کیا ہے؟ ملک کی 80 شوگر ملوں میں سے انھیں صرف جہانگیر ترین نظر آیا۔


ای پیپر