شمالی وزیر ستان میں سٹار کرکٹر ز کی انٹری ۔۔۔پاکستان دشمنوں کو پیغام
07 اپریل 2018 (19:08)

میران شاہ: شمالی وزیرستان میں امن قائم ہونے کے بعد کھیلوں کی سرگرمیوں میں تیزی آگئی ، پاکستان کرکٹ بورڈ نے پاک آرمی کے تعاون سے شمالی وزیرستان ایجنسی میں کرکٹ ٹیلنٹ ہنٹ کا کامیاب انعقاد کیا جس میں معروف پاکستانی کرکٹر زبھی موجود تھے،میران شاہ کے ملک اور مشران کاکہنا تھاکہ کھیلوں کی سرگرمیوں کے ساتھ ساتھ ووکیشنل اور ٹیکنیکل ٹریننگز سے بھی بہت خوش اور مطمئن ہیں ، ہمارے علاقے میں مکمل طور پر امن قائم ہو چکا ہے ، ہم پاکستان آرمی کے انتہائی شکر گزار ہیں،پاکستانی فوج کے ساتھ کھڑے ہیں ، پاک آرمی کی قربانیوں کو کسی صورت بھی ضائع نہیں ہونے دینگے اور وہ نادیدہ دشمن جو علاقے میں امن کو جھٹلاتا ہے اس کو کبھی اس کے مذموم مقاصد میں کامیاب نہیں ہونے دینگے۔

ہفتہ کو پاکستان کرکٹ بورڈ نے پاکستان آرمی کے تعاون سے شمالی وزیرستان ایجنسی میں کرکٹ ٹیلنٹ ہنٹ کا کامیاب انعقاد کیا۔ پاکستان کرکٹ اکیڈمی کے ہیڈ کوچ مشتاق احمد ، سابق ٹیسٹ کرکٹر شاداب احمد ، لیگ سپنر یاسر شاہ کے ساتھ ساتھ جی ایم این سی اے علی ضیا بھی موجود تھے اسلام آباد سے میڈیا رپورٹرز اور اینکرز نے اس ایونٹ کی کوریج کے لئے بھاری تعداد میں شرکت کی ۔ روز ٹی وی کے علاوہ دیگر ٹی وی چینلز کے اینکرز بھی موجود تھے ۔میران شاہ میں نمائندگان اور کرکٹ سٹارز کا استقبال والہانہ انداز میں کیا گیا اور ان کو یونس خان سپورٹس کمپلیکس لے جایا گیا جہاں کرکٹ اور فٹ بال کے لئے ٹیلنٹ ہنٹ کا انعقاد کیا گیا تھا۔ میران شاہ کے نوجوانوں کی بہت بڑی تعداد اس موقع پر کھیلوں میں حصہ لینے کے لئے موجود تھی ۔

آئی ایس پی آر کے تعاون کی وجہ سے میڈیا کو بھر پور کوریج کا موقع ملا ۔ میران شاہ کے ملک اور مشران بھی بہت بڑی تعداد میں موجود تھے اور کھیلوں کی سرگرمیوں کے ساتھ ساتھ ووکیشنل اور ٹیکنیکل ٹریننگز سے بھی بہت خوش اور مطمئن تھے ان کا کہنا تھا کہ ہمارے علاقے میں مکمل طور پر امن قائم ہو چکا ہے اورہم اس وجہ سے ہم پاکستان آرمی کے انتہائی شکر گزار ہیںکو اس موقع پر میر علی بھی لے جایا گیا جہاں میر علی کے ملک حضرات اور مشران سے ان کی ملاقاتیں ہوئیں ۔ مشران ٹی وی نمائندگان سے گھل مل گئے اور میر علی میں امن کی کاوشوں اور قربانیوں کے لئے انہوں نے پاکستانی فوج کے ساتھ کھڑے ہونے کا عزم کیا اور یقین دلایا کہ وہ پاک آرمی کی قربانیوں کو کسی صورت بھی ضائع نہیں ہونے دینگے اور وہ نادیدہ دشمن جو علاقے میں امن کو جھٹلاتا ہے اس کو کبھی اس کے مذموم مقاصد میں کامیاب نہیں ہونے دینگے۔ علاقے کے مشران نے کہا کہ وہ علاقے میں سکولوں ، کالجز، ٹیکنیکل انسٹیوٹیس اور سڑکوں کے علاوہ بازاروں کی تعمیر نو پر بھی پاک فوج کے دل سے شکر گزار ہیں جن کی کوششوں سے ان کے علاقوں میں امن دوبارہ بحال ہوا ہے۔ میر علی میں میڈیا نمائندگان کو پاک آرمی کے زیر اہتمام آرفنیج ہوم (یتیم بچوں کا گھر)بھی لے جایا گیا جہاں ایک سو پچاس سے زائد یتیم بچوں کے رہنے ، پڑھنے اور دیگر سہولتوں کا بھر پور انتظام تھا۔ ان بچوں کی دیکھ بھال کے لئے ماسٹر ڈگری ہولڈرز مدر میڈز ہیں جو ان بچوں کی تعلیم کے ساتھ ساتھ بہترین تربیت کی زمہ داری بھی نبھا رہی ہیں۔ بچوں کے لئے کمپیوٹر لیبس اور کھیلنے کے لئے بہترین گراونڈ ز ہیں۔ بچوں کے چہروں پر خوشی چھلکتی ہے اور وہ پڑھائی میں بہت شوق اور دلچسپی سے حصہ لیتے ہیں۔ یتیم بچوں کے گھر میں مجید ایک سو پچاس بچوں کے لئے دائرہ کار بڑھایا جارہا ہے جہاں ان بچوں کو صحت کی سہولتوں کے ساتھ ساتھ کھیلوں کی سہولتیں بھی دی جارہی ہیں۔


ای پیپر