ن لیگ کے رکن قومی اسمبلی ڈاکٹر رمیش کما ر تحریک انصاف میں شامل
07 اپریل 2018 (16:27)

اسلام آباد : ڈاکٹر رمیش کمار نے عمران خان کیساتھ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہمیشہ پاکستان کیلئے کام کیا ۔آج کا دن میرے لیے بہت بڑا دن ہے ۔میرے آنے کے بعد آپ دیکھیں گے اور لوگ بھی ن لیگ کو چھوڑیں گے ۔ہمیشہ سیاست عوام کی خدمت سمجھ کر کی ۔مسلم لیگ کے موجودہ نظریے سے سخت اختلاف تھا اور اگر نواز شریف اس نظریے کیساتھ الیکشن میں جاتے ہیں تو یہ میرے لیے ٹھیک نہیں تھا ۔حکومت میں رہ عوام کیلئے خدمت کی ۔

مسلم لیگ ن میں ہمیشہ اصولی سیاست کر تا تھا ۔پارٹی کی پارلیمانی  کمیٹیوں  میں ہمیشہ اپنا موقف سامنے رکھا ۔عدلیہ کے خلاف جو کچھ ہو رہا ہے افسوسناک ہے ۔35لاکھ ووٹ اقلیتی ہیں اور مجھے امید ہے سب کے سب عمران خان کو ہی ملیں گے ۔چوہدری نثار سے مختلف معاملات پر بات چیت ہو تی رہی جس پر چوہدری نثار  اکثر   مجھے روکتے رہے اور کہا کہ سب ٹھیک ہو جائے گا ۔انہوں نے پریس کانفرنس میں اس بات کا بھی انکشاف کیا کہ چوہدر نثار مجھے یہ کہا کرتے تھے کہ آپ جیسے لوگوں کی پارٹی میں کوئی قدر نہیں لیکن میں یہ کہنا چاہتا ہوں آج کا دن میرے لئے بہت بڑا دن ہے ۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے رمیش کمار نے کہا کہ دو سال سے جو زبان استعمال کی جارہی ہے، وہ زبان میں نے استعمال کرنے سے انکار کر دیا۔ان کا کہنا تھا کہ جب سیاسی جماعتیں اردگرد گھومتی ہیں تو وہاں نظریہ گم ہو جاتا ہے، چوہدری نثار کہتے تھے کہ آپ جیسے لوگوں کی ہماری پارٹی میں قدر نہیں ہے۔ رمیش کمار نے یہ بھی کہا کہ جہاں سے آیا ہوں وہاں پر ٹینشن ہے، اور جہاں آیا ہوں وہاں پر خوشی ہے، پاناما فیصلے کے بعد اجلاس میں کہا کہ بیرسٹر ظفر اللہ کی بریفنگ سے مطمئن نہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ اقلیتوں کے مسائل کو ایوان میں اٹھایا،متروکہ وقف املاک بورڈ کے چیئرمین کےلئے جسٹس ( ر ) رانا بھگوان داس کا نام تجویز کیا،چوہدری نثا نے حمایت کی لیکن نام صدیق الفاروق کا سامنے آیا۔ رمیش کمار کا کہناتھاکہ میری بعد بھی مزید لوگ تحریک انصاف میں شامل ہوں گے۔


ای پیپر