بھارتی عدالت نے سلمان خان کی قسمت کا فیصلہ سنا دیا
07 اپریل 2018 (16:02)

ممبئی : بھارتی ریاست راجستھان کے ضلع جودھپور کی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن عدالت نے سلمان خان کی نایاب سیاہ ہرن کے شکار کیس میں ضمانت منظور کرتے ہوئے ان کی رہائی کا حکم دے دیا ۔درخواست ضمانت کی سماعت پر سلمان خان کی بہنیں بھی عدالت میں موجودتھیں۔جودھ پورکی عدالت نے سلمان خان کو کالے ہرنوں کے غیرقانونی شکار کے الزام میں پانچ سال قید کی سز ا سنائی تھی۔جس کے بعد انہیں سینٹرل جیل میں بند کر دیا گیاتھا۔ سلمان خان کے وکلاءنے ان کی ضمانت پر رہائی کی درخواست دائر کی جس کی سماعت کے بعد عدالت نے فیصلہ آج تک کے لیے محفوظ کر لیا تھا۔

عدالت نے سلمان خان کی درخواست ضمانت پر 25، 25 ہزار کے 2 مچلکے جمع کرانے کا حکم دیا ہے۔ عدالت نے ان کے بغیر اجازت ملک چھوڑنے پر پابندی عائد کردی ہے اور انہیں 7 مئی کو دوبارہ عدالت میں پیش ہونے کا حکم دیا ہے۔جودھ پور کی عدالت نے کالے ہرن شکار کیس میں سلمان خان کو مجرم قرار دیا تھا۔ عدالت نے سلمان خان کو 5 سال قید اور 10 ہزار روپے جرمانے کی سزا سنائی تھی سلمان خان نے سزا سنائے جانے کے بعد دو راتیں جیل میں گزاریں۔

اس سے قبل عدالتی فیصلے کے بعد سلمان خان کو 5 اپریل کو ہی جودھپور کے سینٹرل جیل کے بیرک نمبر 2 میں قید کیا گیا تھا۔7 اپریل کی صبح کو ہی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ میں کیس کی سماعت شروع ہوئی، عدالت نے سہ پہر 3 بجے اداکار کی ضمانت منظور کی ۔


ای پیپر