PTI, allies, vote, confidence, Prime Minister, Imran Khan
06 مارچ 2021 (10:55) 2021-03-06

اسلام آباد: وزیر اعظم عمران خان کو اعتماد کا ووٹ دینے کیلئے تحریک انصاف اور اتحادی جماعتوں کے اراکیں قومی اسمبلی پُر عزم ، کہا آج جمہوریت اور اخلاقیات کی جیت ہوگی ۔

خیال رہے کہ وزیراعظم پر اعتماد کے ووٹ کی قرارداد شاہ محمود قریشی پیش کریں گے ، قرارداد کا متن ہے کہ ایوان آرٹیکل 91/7 کے تحت وزیراعظم پر اعتماد کا اظہار کرتا ہے ۔

اس موقع پر معاون خصوصی پنجاب فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ ملکی سیاسی تاریخ آج ایک نیا سیاسی رخ اختیار کرنے جا رہی ہے ۔

اپوزیشن کے مطالبے کے بغیر وزیراعظم اعتماد کا ووٹ لیں گے ، وزیراعظم آج اعتماد کا ووٹ حاصل کرنے میں کامیاب ہوں گے ، وزیراعظم نئے ولولے کے ساتھ مافیا کے خلاف جدوجہد جاری رکھیں گے ۔

ادھر وفاقی وزیر اسد عمر نے اپنی ٹویٹ میں کہا ہے کہ عمران خان عوام کے اعتماد کے ساتھ خیانت نہیں کریں گے ، عمران خان کبھی بھی پاکستان کی بہتری کیلئے جدوجہد سے باز نہیں آئیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ میرا اعتماد کا ووٹ میرے کپتان وزیراعظم عمران خان کو جاتا ہے ۔

وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے اپنی ٹویٹ میں کہا کہ ہم ایک بار پھر وزیر اعظم عمران خان پر اپنے اعتماد کو بحال کریں گے جبکہ لوٹ مار کرنے والوں اور چوروں کو شکست ہوگی ۔

وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان اقتدار کے بجائے اقدار کی سیاست کرتے ہیں ، انہوں نے کہا کہ وزیراعظم نے ایوان سے اعتماد کا ووٹ لینے کا دلیرانہ فیصلہ کیا ۔

وزیر اطلاعات نے کہا کہ تحریک انصاف ہمیشہ سے ہر سطح پر شفاف الیکشن چاہتی ہے ، اتحادی جماعتیں ہمارے ساتھ ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اعتماد کا ووٹ لینے کے بعد وزیراعظم اور زیادہ مضبوط ہوں گے ۔

وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے کہا کہ اعتماد کا ووٹ لینے جیسا فیصلہ صرف عمران خان ہی کرسکتے ہیں ، پی ٹی آئی اور اتحادی جماعتوں کے ارکان وزیراعظم کو بھرپور اعتماد کا ووٹ دیں گے ۔


ای پیپر