سینیٹ الیکشن بارے وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کی نواز شریف سے اہم ملاقات
06 مارچ 2018 (18:10) 2018-03-06

اسلام آباد : سینیٹ الیکشن کیا ہو ئے ملک کے سیاسی پنڈتوں کی تمام پیشگوئیاں غلط ثابت ہو گئیں ۔اراکین نے اپنے ہی رہنماﺅں کو دھوکا دے دیا ۔یہاں تک کے عمران خان نے ہارس ٹریڈنگ کیخلاف سخت ایکشن لیتے ہوئے ایسے اراکین کو پارٹی سے نکالنے کا فیصلہ کر لیا ۔تمام پارٹیاں اس وقت جوڑ توڑ میں مصروف ہیں ۔ سینیٹ چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین کیلئے تمام جماعتیں ایک دوسرے کیساتھ رابطے میں ہیں اسی سلسلے میں وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے نواز شریف سے ملاقات کی ہے جس میں چیئر مین و ڈپٹی چیرمین سینیٹ کے انتخاب کے لیے تبادلہ خیال کیا گیا، اس کے علاوہ ملاقات میں اتحادی جماعتوں سے رابطوں پر غور اور نئی حلقہ بندیوں سے متعلق بھی بات چیت کی گئی۔

واضح رہے کہ سینیٹ انتخابات کے بعد کوئی بھی سیاسی جماعت سادہ اکثریت حاصل نہیں کرسکی ہے اس لیے نئے چیئرمین سینیٹ کے انتخاب کے لیے سیاسی جوڑ توڑ اور رابطوں کا سلسلہ جاری ہے۔ بلوچستان کے منتخب آزاد سینیٹرز نے خود کو اوپن قرار دے دیا ہے اور تمام جماعتوں سے بات چیت کے لیے تیار ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کی جانب سے چیئرمین سینٹ کے امیدوار راجہ ظفرالحق ہو سکتے ہیں، اس سلسلے میں نواز شریف نے پارٹی رہنمائوں کو پارلیمانی جماعتوں سے رابطوں کا ٹاسک سونپ رکھا ہے۔ دوسری جانب پاکستان پیپلز پارٹی اور تحریک انصاف کے درمیان در پردہ رابطوں کے بعد دونوں جماعتوں نے سینیٹ چیئرمین کے لیے متفقہ امیدوار میدان میں لانے کی تیاریاں شروع کردی ہیں۔


ای پیپر