فوٹو بشکریہ ٹوئٹر

وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی اعظم سواتی نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دیدیا
06 دسمبر 2018 (15:35) 2018-12-06

اسلام آباد: وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی اعظم سواتی نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دیدیا، انہوں نے اپنا استعفیٰ وزیراعظم عمران خان کو خود پیش کیا۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی اعظم سواتی نے اپنا استعفیٰ کابینہ اجلاس کے دوران وزیراعظم کو پیش کیا۔ اعظم سواتی نے کہا سپریم کورٹ میں زیر سماعت کیس کی وجہ سے خود مستعفی ہونے کے لیے تیار ہوں۔

یاد رہے کہ چیف جسٹس نے آئی جی اسلام آباد تبادلہ کیس میں اعظم سواتی پر 62 ون ایف کے تحت ٹرائل کا عندیہ دیا تھا۔ وزیراعظم عمران خان نے صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا تھا کہ اعظم سواتی کے کیس میں کوئی مداخلت نہیں کی گئی۔ اگر وفاقی وزیر قصور وار ثابت ہو گئے تو وہ خود مستعفی ہو جائیں گے۔

واضح رہے کہ آئی جی اسلام آباد تبادلہ کیس میں اعظم سواتی کو قصور وار قرار دے دیا گیا تھا اور ساتھ ہی جے آئی ٹی نے رپورٹ سپریم کورٹ میں بھی جمع کرا دی تھی۔

جے آئی ٹی رپورٹ میں کہا گیا کہ اعظم سواتی کے ساتھ الگ طرح کا سلوک برتا گیا۔ انہوں نے عہدے کا غلط استعمال کیا جس پر چیف جسٹس نے کہا کہ رپورٹ کی بنیاد پر مقدمہ درج ہونا چاہئے، غریب افراد کو مارا پیٹا گیا اس لئے معافی قبول نہیں۔ دیکھنا ہے 62 ون ایف کا اطلاق ہوتا ہے یا نہیں۔ کیا ایسے آدمی کو وزیر کے عہدے پر رہنا چاہیے؟


ای پیپر