زرعی سکینڈل:پنجاب کے وزیر خوراک سمیع اللہ چوہدری اچانک مستعفی
06 اپریل 2020 (17:36) 2020-04-06

لاہور :پنجاب کے وزیر خوراک سمیع اللہ چوہدری وزیر اعلیٰ عثمان بزدار سے ملاقات کے بعد مستعفی ہو گئے ۔

نجی ٹی وی نے ذرائع کے حوالے سے کہاہے کہ سمیع اللہ چوہدری نے وزیراعلیٰ عثمان بزدار سے ملاقات کی جو پندرہ منٹ تک جاری رہی جس کے بعد انہوں نے عہدے سے استعفیٰ دیدیا ،اپنے استعفے میں انہوں نے موقف اختیار کیاہے کہ جب سے ایف آئی اے کی رپورٹ آئی ہے مجھ پربہت سے الزامات لگ رہے ہیں ، جب تک الزامات کلیئر نہیں ہوتے میں اس وقت کوئی حکومتی عہدہ نہیں لوں گا ،مجھ پرالزام ہے کہ محکمے کے ریفارمز نہیں کر سکا۔

نجی ٹی وی کے مطابق پنجاب کے وزیر خوراک سمیع اللہ چوہدری نے انکوائری میں نام آنے پر عہدے سے استعفیٰ دیدیاہے اور کہاہے کہ الزامات کے ختم ہونے تک وہ کوئی حکومتی عہدہ نہیں رکھیں گے تاہم ان کے بعد اب کمشنر ڈی جی خان نسیم صادق کو او ایس ڈی بنا دیا گیاہے ، وہ 2019 میں سیکریٹری خوراک رہے ہیں .

انہوں نے رضاکارانہ طور پر وزیراعلیٰ پنجاب کو پیشکش کی تھی کہ وہ انہیں انکوائری مکمل ہونے تک عہدے سے ہٹا دیں جس پرعثمان بزدارنے عملدرآمد کردیا ۔

ان کے علاوہ 2019 میں ڈائریکٹر فورڈ پنجاب رہنے والے ظفر اقبال کو بھی عہدے سے ہٹاتے ہوئے او ایس ڈی بنا دیا گیاہے۔


ای پیپر