پی سی بی نے نئے سینٹرل کنٹریکٹ کیلئے کام شروع کر دیا،محمد حفیظ کی تنزلی کا امکان
06 اپریل 2018 (17:19) 2018-04-06

لاہور:پاکستان کر کٹ بورڈ( پی سی بی )نےنئے سینٹرل کنٹریکٹ کیلئے کام شروع کر دیا، نئے سینٹرل کنٹریکٹ میں محمد حفیظ کیلئے خطرے کی گھنٹی بج گئی جب کہ اے کیٹیگری سے تنزلی کا امکان ہے،تینوں فارمیٹ کے ٹیلنٹ پول میں شامل کھلاڑیوں کی فٹنس کا معیار جانچنے کیلئے ٹیسٹ9اور10اپریل کو ہونے ہیں،ان میں گذشتہ سال سینٹرل پانے والے35کرکٹرز کے ساتھ پی ایس ایل میں عمدہ کارکردگی کی بدولت ویسٹ انڈیز کیخلاف ٹی ٹوئنٹی سیریز میں انٹرنیشنل کیریئرکا آغاز کرنے والے حسین طلعت،آصف علی، شاہین شاہ آفریدی بھی شامل ہوں گے جب کہ کافی عرصے سے نظر انداز فواد عالم کو بھی طلب کیا جائے گا۔

گزشتہ معاہدوں کی مدت یکم جولائی2017سے 30جون 2018تک ہے، فٹنس ٹیسٹ کے بعد نئے سینٹرل کنٹریکٹ کیلیے فہرست کی تیاری بھی شروع ہوجائے گی،گذشتہ معاہدے میں سرفراز احمد،اظہر علی،شعیب ملک،محمد حفیظ ،یاسر شاہ اور محمد عامر اے کیٹیگری میں شامل تھے۔بابر اعظم،اسد شفیق اور حسن علی کو بی میں جگہ ملی، فخرزمان،حارث سہیل، احمد شہزاد،سمیع اسلم،شان مسعود،وہاب ریاض، راحت علی، جنید خان،سہیل خان،محمد عباس اور شاداب خان سی کیٹیگری میں شامل تھے۔امام الحق، عمر امین، محمد رضوان، آصف ذاکر، عثمان صلاح الدین،فہیم اشرف، عامر یامین،رومان رئیس، عثمان شنواری،میر حمزہ، محمد نواز، بلال آصف،محمد حسان،محمد اصغر ڈی کیٹیگری کے قابل سمجھے گئے تھے۔

ذرائع کے مطابق نئے سینٹرل کنٹریکٹ میں محمد حفیظ کی ٹاپ کیٹیگری پوزیشن خطرے میں پڑ گئی،حسن علی اور بابر اعظم ایک درجہ چھلانگ کے ساتھ اے میں ترقی پانے کے مضبوط امیدوار ہیں۔ سی سے سہیل خان کی رخصتی کا قوی امکان ہے، فخرزمان بی میں جبکہ فہیم اشرف اور رومان رئیس سی میں جگہ بنا سکتے ہیں،ڈی کیٹیگری سے آصف ذاکر اور محمد رضوان کی چھٹی ہو سکتی ہے۔عمر امین کی پوزیشن بھی خطرے میں پڑ گئی، حسین طلعت، آصف علی اور شاہین شاہ آفریدی کیلیے کنٹریکٹ کے دروازے کھلنے کا امکان روشن ہے، سعد علی اور فواد عالم کے نام بھی زیر غور ہونگے۔


ای پیپر