لاہور انتخابی ریلی میں (ن) لیگی اور پی ٹی آئی کارکنوں میں تصادم ٗ 5زخمی ٗ مقدمہ درج 
05 اکتوبر 2018 (15:32) 2018-10-05

لاہور :ضمنی انتخابات کے سلسلہ میں انتخابی مہم کے درمیان لاہور میں پی ٹی آئی اور مسلم لیگ( ن ) کے کارکنوں ایک بار پھر آپس میں بھڑ گئے ٗ ( ن ) لیگ کی ریلی ہنگامہ آرائی کی نظر ٗ 5کارکنوں زخمی ہوگئے ٗ مقدمہ درج کر لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق ( ن ) لیگ کی طرف سے قینچی امر سدھو کی طرف ریلی کا انعقاد کیا گیا تھا جہاں پر خواجہ سعد رفیق کی ریلی میں ن لیگ اور پی ٹی آئی کارکنوں میں تصادم ہو گیا۔ جس میں پانچ افراد زخمی ہوگئے۔، دونوں فریقین کی جانب سے ایک دوسرے کے خلاف تھانے میں درخواست جمع کروا دی گئی ہے۔ لاہور میں حلقہ این اے 131 میں ضمنی الیکشن مہم عروج پر پہنچ گئی۔ ن لیگ کی جانب سے قینچی امرسدھو میں ریلی کا انعقاد ہوا۔ جو ہنگامہ آرائی کی نذر ہوئی، تصادم میں چار افراد زخمی ہوئے، ن لیگ اور پی ٹی آئی نے ایک دوسرے کو ذمہ دار ٹھہرایا۔

واقعے کے بعد پی ٹی آئی اور ن لیگ کے کارکنوں کی بڑی تعداد تھانہ فیکٹری ایریا کے باہر جمع ہو گئی۔ پی ٹی آئی امیدوار ہمایوں اختر بھی اپنے ساتھیوں کے ہمراہ تھانہ فیکٹری ایریا پہنچے اور ن لیگ کے کارکنوں کیخلاف اندراج مقدمہ کی درخواست جمع کرائی۔ لیگی امیدوار سعد رفیق نے طلبا تنظیم کے کارکنوں اور لاہور کے بلدیاتی نمائندوں کو ریلی میں بلایا تھا یہ سعد رفیق کا سوچا سمجھا منصوبہ تھا۔


ای پیپر