Tribute to Muhammad Ali Sadpara, announcement to establish a training institute
کیپشن:   فائل فوٹو
05 مارچ 2021 (08:09) 2021-03-05

سکردو: گلگت بلتستان کی حکومت نے پاکستان کے مایہ ناز کوہ پیما اور قومی ہیرو محمد علی سدپارہ کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے ان کے نام سے ایک انسٹی ٹیوٹ قائم کرنے کا اعلان کیا ہے جس میں نئے آنے والے کوہ پیماؤں کو ٹریننگ دی جائے گی۔

اس بات کا اعلان گلگت بلتستان کے وزیر سیاحت راجہ ناصر نے کیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ صوبائی حکومت مشکل کی اس گھڑی میں محمد علی سدپارہ کے خاندان کے ساتھ ہے اور انھیں ہر قسم کی سپورٹ کی جائے گی۔

نجی ٹیلی وژن سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے انکشاف کیا کہ محمد علی سدپارہ گرچہ خود مالی طور پر اتنے مستحکم نہیں تھے تاہم اس کے باوجود وہ جو کچھ کماتے تھے، اس کا زیادہ تر حصہ غریبوں میں تقسیم کر دیا کرتے تھے۔

خیال رہے کہ محمد علی سدپارہ دو غیر ملکی کوہ پیماؤں کے ہمراہ دنیا کی سب سے خطرناک چوٹی کے ٹو کو سر کرنے گئے تھے لیکن ان کی واپسی نہیں ہو سکی۔ پاکستان سمیت دنیا بھر میں اس واقعے پر شدید افسوس کا اظہار کیا ہے۔

محمد علی سدپارہ کے صاحبزادے ساجد سدپارہ نے میڈیا کو بتایا تھا کہ ان کے والد نے کے ٹو کی مہم کو سر کر لیا تھا لیکن واپسی پر ہی وہ کسی حادثے کا شکار ہوئے۔ ان کا کہنا تھا کہ کے ٹو پر سب سے مشکل مقام باٹل نیک ہے اس مرحلے کو عبور کرنے کے بعد کے ٹو کو سر کرنے میں کوئی مشکلات پیش نہیں آتیں۔

دوسری جانب گلگت بلتستان کے وزیر سیاحت نے بتایا ہے کہ حکومت کوہ پیماؤں کیلئے بہتر انشورنس پالیسی لانے کا پروگرام بنا رہی ہے اور یہ کہ محمد علی سدپارہ کیساتھ پیش آنے والے واقعے کے بعد کوہ پیمائی کو موسم سرما میں بند کرنے کا کوئی پروگرام نہیں ہے۔


ای پیپر