”پاک بھار ت کشیدگی “کرکٹ کے محاذ پربھارت مشکل میں پھنس گیا
کیپشن:   Image Source : Twitter
05 مارچ 2019 (20:13) 2019-03-05

دبئی:بھارت کی پاکستان مخالف حرکتوں کی بازگشت انٹر نیشنل کرکٹ کونسل کے اجلاس میں بھی سب نے سنی جہاں پاکستان نے آئی سی سی پر واضح کیا کہ اگر بھارت پاکستانی کرکٹرز کو ویزوں کے اجراکی یقین دہانی تحریری صورت میں نہیں کراتا تو اس سے ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ اور ورلڈ کپ2023کی میزبانی واپس لی جائے۔

دبئی میں آئی سی سی کے اجلاس کے دوران پی سی بی نے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کو بتا دیا ہے کہ پاکستانی کھلاڑیوں اور آفیشلز کو ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ ویزوں کے اجراکی پیشگی اور تحریری ضمانت نہ دیئے جانے پر بھارت سے میگا ایونٹس کی میزبانی واپس لی جائے۔ پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین احسان مانی نے آئی سی سی کو بتایا کہ حال ہی میں بھارتی حکومت نے پاکستانی شوٹنگ اور سنوکر کی ٹیموں کو ویزہ دینے سے انکار کیا تھا جسکی وجہ سے پاکستانی کھلاڑی انٹر نیشنل ایونٹس نہیں کھیل سکے لہذا اس بات کی کیا ضمانت ہے کہ ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ اور ورلڈ کپ کے لیے پاکستانی کرکٹرز اور آفیشلز کو ویزہ جاری کیا جائیگا.

احسان مانی کے بیان پر آئی سی سی کے چیئرمین ششانک منوہر نے کہا کہ بھارت میں شیڈول دونوں ٹورنامنٹس سے ایک ایک سال پہلے بی سی سی آئی کو اپنی حکومت سے تحریری ضمانت لینا ہو گی،آئی سی سی نےبھارتی کرکٹ بورڈ کو کہا کہ وہ نومبر تک اپنی حکومت سے پاکستانی کھلاڑیوں کو ویزہ دینے کی تحریری یقین دہانی حاصل کر کے بتائے ورنہ آئی سی سی بھارت سے میزبانی واپس لے سکتا ہے ۔


ای پیپر