پانامہ کا فیصلہ کر کے چیف جسٹس نے نئے پاکستان کی بنیا د رکھی :عمران خان
05 دسمبر 2018 (20:25) 2018-12-05

اسلام آباد:وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ جمہوریت اور قانون کی حکمرانی لازم و ملزوم ہیں ۔ چیف جسٹس نے پاناما لیکس کا فیصلہ کرکے نئے پاکستان کی بنیاد رکھ دی تھی۔ہماری جماعت نے 6 نئے قوانین پر کام مکمل کرلیا جہیں پارلیمنٹ میں پیش کیا جائےگا۔

اسلام آباد میں بڑھتی آبادی پرفوری توجہ کے موضوع پرمنعقدہ سمپوزیم سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ وہ معاشرہ ترقی کرتا ہے جہاں قانون کی پاسداری ہو، کیوں کہ کسی بھی ملک کی ترقی کے لئے جمہوریت اور قانون کی حکمرانی لازم و ملزوم ہے، میں یہ سمجھتا ہوں کہ چیف جسٹس پاکستان میاں ثاقب نثار نے پاناما لیکس کا فیصلہ کرکے نئے پاکستان کی بنیاد رکھ دی تھی۔وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ماضی کی جمہوری حکومتیں صرف 5 سال کا سوچتی تھیں کہ اگلا الیکشن کیسے جیتیں، ان کے دور میں تمام حکومتی ادارے مفلوج تھے، ان کی چھوٹی سوچ کی وجہ سے ہم پانی جیسے سنگین مسئلے میں پھنس گئے، یہاں انتخابات ہوتے تھے قانون پر عملدرآمد نہیں ہوتا تھا، کسی نے نہیں سوچا تھا کہ وزیرِاعظم بھی قانون کے تابع ہوگا، میرے کانوں نے یہ بھی سنا کہ اچھا ہوا بنگلا دیش الگ ہوگیا وہ بوجھ تھا، آج وہی بنگلا دیش آگے کی طرف جارہا ہے۔

عمران خان نے کہا جمہوریت کا مقصد حکمرانوں کو قانون کے نیچے لانا ہے، سی ڈی اے میرے نیچے ہے پھر بھی آپکو بتاتا ہے عمران خان نے یہاں غلطی کی، میرے ماتحت ادارہ سی ڈی اے آج عدالت کو بنی گالا کی صورتحال بتارہا ہے، ایسا پہلے نہیں تھا، جن بوتل سے نکل چکا ہے،اب کوئی نہیں سوچے گا کہ وہ قانون سے بالاتر ہے۔ان کا کہنا تھا کہ اب پاکستان میں ادارے خود مختار ہو رہے ہیں، ہم بڑے بڑے قبضہ گروپوں پر ہاتھ ڈال رہے ہیں، قانون سازی کے لیے بھی اقدامات کررہے ہیں، دنیا کے کئی ممالک پاکستان میں سرمایہ کاری میں دلچسپی رکھتے ہیں، آنے والے دنوں میں قرضوں سے نکل جائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان میں آبی وسائل کی بھی کمی ہورہی، جنگلات کا صفایا کردیا گیا ہے، اور پاکستان دنیا میں سب سے زیادہ عالمی ماحولیاتی تبدیلی سے متاثرہ ممالک میں 7ویں نمبر پر ہے۔وزیرِ اعظم کا کہنا تھا کہ شہروں کی وسعت بھی افزائش آبادی کی شرح پر اثر انداز ہورہی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ حکومتی ترجیحات میں بڑھتی ہوئی آبادی سے متعلق مسئلہ بہت پیچھے تھا، تاہم چیف جسٹس کا اسے مسئلے کو آگے لانے پر شکریہ ادا کرتے ہیں جبکہ حکومت نے اس معاملے میں ٹاسک فورس بھی تشکیل دے دی ہیں۔وزیرِ اعظم نے کہا کہ پاکستان میں بڑھتی ہوئی آبادی کا مسئلہ قومی مسئلہ ہے جس میں پوری قیادت، سول سوسائٹی اور علما کو بھی سامنے آنا پڑے گا۔اپنے خطاب کے آخر میں وزیرِ اعظم عمران خان نے پاکستان کی بڑھتی ہوئی آبادی کو کنٹرول کرنے سے متعلق مہم کا آغاز کرنے پر چیف جسٹس کا شکریہ بھی ادا کیا۔


ای پیپر