فوٹوبشکریہ فیس بک

زینب قتل کیس میں سزا یافتہ مجرم عمران کے خلاف مزید تین کیسز میں فیصلہ جاری
05 اگست 2018 (10:31) 2018-08-05

لاہور : زینب قتل کیس میں سزا یافتہ مجرم عمران کے خلاف مزید تین کیسز میں فیصلہ جاری کردیا گیا ۔انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت کے ایڈمن جج شیخ سجاد احمد نے حتمی دلائل سننے کے بعد مجرم عمران کو سزا کا حکم جاری کیا۔ ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل عبدالروف وٹو نے دلائل دیئے۔

تفصیلات کے مطابق زینب قتل کیس کے مرکزی مجرم عمران کیخلاف مزید تین کیسز کا فیصلہ جاری کر دیا گیا ۔عدالت نے مجرم عمران کو 12 دفعہ سزائے موت 60 لاکھ جرمانہ اور 30 لاکھ روپے دیت کا حکم جاری کیا۔ عدالت نے 5 سالہ عائشہ آصف کے ساتھ زیادتی اور قتل کیس میں 4 دفعہ سزائے موت 20 لاکھ جرمانہ اور 10 لاکھ روپے دیت کا حکم جاری کیا۔عدالت نے 8 سالہ لائبہ کے ساتھ زیادتی اور قتل کیس میں 4 بار سزائے موت 20 لاکھ جرمانہ اور 10 لاکھ روپے دیت کا حکم جاری کیا۔عدالت نے 7 سالہ نور فاطمہ کے ساتھ زیادتی اور قتل کیس میں بھی 4 بار سزائے موت 20 لاکھ جرمانہ اور 10 لاکھ روپے دیت کا حکم جاری کیا۔

خیال رہے کہ اس سے قبل انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے قصور کی 7 سالہ زینب سے زیادتی و قتل کے مجرم عمران کو 4 بار سزائے موت سنائی تھی ۔انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت کے جج سجاد احمد نے زینب زیادتی و قتل کیس کا فیصلہ سنایا، جسے ملکی تاریخ کا تیز ترین ٹرائل قرار دیا گیا۔


ای پیپر