PDM issued Notice to PPP and Awami National Party
کیپشن:   فائل فوٹو
05 اپریل 2021 (11:19) 2021-04-05

اسلام آباد: پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) نے اپوزیشن اتحاد میں طے گئے اصولوں سے انحراف پر پیپلز پارٹی اور عوامی نیشنل پارٹی کو شوکاز نوٹس جاری کر دیئے ہیں۔

اپوزیشن اتحاد کی دونوں اہم جماعتوں کو جاری کئے گئے نوٹسز میں واضح کیا ہے اس کے جوابات کو 7 روز کے اندر اندر فراہم کیا جائے۔

ذرائع کے مطابق پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے دونوں جماعتوں کو یہ شوکاز نوٹسز جاری کرنے کی ہدایت کی تھی۔

پاکستان پیپلز پارٹی اور عوامی نیشنل پارٹی کو یہ نوٹسز پی ڈی ایم کے جنرل سیکرٹری شاہد خاقان عباسی نے بھجوائے ہیں۔

چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری اور عوامی نیشنل پارٹی کے سربراہ اسفند یار ولی کو براہ راست بھیجے گئے ان نوٹسز میں ان سے ہی جواب طب کیا گیا ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق دونوں اپوزیشن قائدین سے جواب طلب کیا گیا ہے کہ بتایا جائے کہ ایوان بالا میں قائد حزب اختلاف کیلئے بلوچستان عوامی پارٹی (بی اے پی) کے سینیٹرز کی حمایت کیوں لی گئی تھی۔ یہ اقدام کرکے پی ڈی ایم کے اصولوں کی خلاف ورزی کی گئی، دونوں جماعتیں بتائیں کہ ایسا کیوں کیا گیا؟

دونوں جماعتوں کو بھیجے گئے شوکاز نوٹسز میں کہا گیا ہے کہ پیپلز پارٹی اور عوامی نیشنل پارٹی نے ایوان بالا میں جو اقدام اٹھایا اس سے جمہوریت، اپوزیشن تحریک اور پی ڈی ایم کے اتحاد کو شدید نقصان پہنچا تھا۔

ادھر خبریں ہیں کہ ایوان بالا میں قائد حزب اختلاف سید یوسف رضا گیلانی اپوزیشن اتحاد پی ڈی ایم کی جانب سے بھیجے گئے نوٹس کی تصدیق کی ہے۔

ذہن میں رہے کہ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کا دعویٰ ہے کہ تمام اپوزیشن جماعتوں میں اس بات پر مکمل اتفاق کیا گیا تھا کہ سینیٹ میں قائد حزب اختلاف مسلم لیگ (ن) سے ہوگا لیکن پیپلز پارٹی نے وعدہ خلافی کرتے ہوئے یوسف رضا گیلانی کیلئے بلوچستان عوامی پارٹی کی حمایت حاصل کی اور انھیں اپوزیشن لیڈر بنوا دیا۔


ای پیپر