موجودہ حکومت کاروبار کو بہتر کرنے کیلئے کوشاں ہے : عبدالرزاق دائود
04 May 2019 (18:26) 2019-05-04

لاہور:وزیر اعظم کے مشیر عبدالزاق داد نے کہا ہے کہ خسارے میں چلنے والے سرکاری اداروں کی نجکاری کا عندیہ دیتے ہوئے کہا کہ نقصان والے اداروں کو فعال بنانا ہوگا۔

مشیر برائے کامرس اینڈ ٹیکسٹائل عبدالرزاق داد نے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں اس وقت یہ دیکھنے کی ضرورت ہے کہ کاروباری مراکز میں آج ہم کہاں جا رہے ہیں جبکہ موجودہ حکومت کاروبار کو بہتر کرنے میں دن رات کوشاں ہے حکومت کوئی ایسا کام نہیں کرے گی جس سے عوام کو فائدہ نہ پہنچے، عمران خان کا وژن عوام کو آسانیاں دینا ہے تاہم تھوڑا سا وقت لگے گا۔پچھلے 5 سالوں میں ملک میں صنعتیں بند ہوئیں، برآمدات میں کمی ہوئی مگر اسحاق ڈار نے اس کا نوٹس نہیں لیا، گزشتہ حکومتوں نے حقائق عوام کو نہیں بتائے، ہم نے مال درآمد کرنے والی قوموں میں شامل نہیں ہونا، اپنی صنعتوں کا خیال رکھنا ہوگا اب ٹریکٹر پاکستان میں مکمل طور پر بن رہا ہے اور ہم افریقی ممالک کو ٹریکٹر بر آمد کررہے ہیں، ایسی صنعتوں کو فروغ دے رہے ہیں جس سے روزگار بڑھے۔

انہوں نے کہا کہ تاجر کہتے ہیں بس پیسے کما ئو اور صنعت جہنم میں جائے5 سال سے درآمد کا تناسب بری طرح سے نیچے گیا ہے‘ہمیں اسے بہتر کرنے کی ضرورت ہے اور ہمیں اپنی انڈسٹری کی بہتری کے لیے کام کرنا چاہے جبکہ کاروبار کے حوالے سے کسی کی بھی مداخلت منظور نہیں کی جائے گی کاروبار کے مواقع ہی ہماری انڈسٹری کو بہتر کر سکتے ہیں اور کاروبار کے حوالے سے ہماری پالیسی واضح ہونی چائیے۔ ماضی میں جوتے ا را میٹریل لانے پر 5 فیصد ڈیوٹی اور ممل جوتا لانے پر 20 فیصد ڈیوٹی دینا پڑتی تھی۔

عبدالرزاق داد نے سی پیک پر بات کرتے ہوئے کہا کہ سی پیک بہت بہتر ہے لیکن اب ڈائریکشن تبدیل ہو گئی ہے۔ سی پیک ہمارا کامیاب منصوبہ ہے اور اب اس کی سمت تبدیل نہیں ہونے دیں گے ایف ٹی اے سے چائنہ اور پاکستان کو بہت فائدہ ہو گا اور کاروبار کے مزید مواقع ملیں گے۔ حکومت جاپان سے دسمبر میں بات ہو گی اور پھر وریا سے بھی کاروبار کے حوالے سے بات کریں گے۔


ای پیپر