Federal Minister, Shafqat Mahmood, educational institutions, Pakistan, January, February
04 جنوری 2021 (13:24) 2021-01-04

لاہور : وفاقی وزیر شفقت محمود کی صدارت بین الصوبائی وزرائے تعلیم کانفرنس میں ملک بھر میں یکم فروی سے جامعات کھولنے کا فیصلہ کر لیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق کانفرنس میں فیصلہ کیا گیا کہ نویں سے بارہویں تک تعلیمی ادارے 18 جنوری کو کھولیں جائیں گے۔ جبکہ پہلی سے 8 ویں جماعت تک تعلیمی ادارے 25 جنوری تک کھولیں جائیں گے۔

اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے کہا کہ تعلیمی ادارے کھولنے کیلئے تمام صوبوں سے رائے لی گئی، 18 جنوری سے نویں سے بارہویں تک کلاسز شروع ہو جائیں گی ، یہ وہ بچے ہیں جن کا آگے چل کر امتحان ہونا ہے۔

انہوں نے مزید بتایا کہ 25 جنوری کو کلاس ون سے آٹھویں جماعت تک کلاسز شروع ہوں گی۔ جبکہ یونیورسٹیز یکم فروری سے کھول دی جائیں گی۔ شفقت محمود نے بتایا کہ بورڈ کے جو امتحانات مارچ یا اپریل میں ہونے تھے وہ ملتوی ہوگئے ہیں ، بورڈ کے یہ امتحانات اب مئی اور جون میں ہوں گے۔

انہوں نے کہا کہ 14 یا 15 تاریخ کو صحت کے معاملے پر میٹنگ کریں گے اور موجودہ صورتحال کا مشاہدہ کریں گے۔

واضح رہے کہ شاپنگ مالز، مارکیٹیں ، پارکس اور دیگر عوامی مقامات کھلے ہیں جبکہ حکومت نے تعلیمی اداروں کو عالمی وبا پھیلنے کے خدشے کے باعث بند کر رکھا ہے۔ تعلیمی اداروں کی بندش کو والدین ، تعلیمی اداروں کے بچوں اور اساتذہ نے مسترد کرتے ہوئے سکول کالجز اور یونیورسٹیاں فوری کھولنے کا مطالبہ کیا تھا۔

والدین کا کہنا تھا کہ وبا اگر مارکیٹ اور دیگر عوامی اجتماعات سے نہیں پھیل رہا تو تعلیمی اداروں کے کھلنے سے بھی نہیں پھیلے گا۔ حکومت تعلیمی ادارے ایس اوپیز کے تحت کھولنے کی اجازت دے۔

ادھر اسکولوں کی طویل بندش کے خلاف بچے سڑکوں پر نکل آئے ، صادق آباد میں مختلف اسکولوں کے طالب علموں نے کتابیں اور بستے اٹھا کر احتجاج کیا، تعلیمی اداروں کی طویل بندش سے اساتذہ بھی پریشان ہیں ، کہتے ہیں تعلیمی اداروں کی مسلسل بندش سے بچوں کی تعلیم کا ازالہ ممکن نہیں ہو سکے گا۔


ای پیپر