ہم افغان جنگ میں تھک چکے ہیں : ڈونلڈ ٹرمپ
04 فروری 2019 (13:23) 2019-02-04

امریکی صدر ٹرمپ جب منتخب ہوئے تھے تو ان کا جوش و جنون آسمان کو چھو رہا تھا لیکن زمینی حقائق کو سمجھنے کے ساتھ ہی ان کے بیانات بھی مایوسی میں ڈھل گئے ہیں اور اب وہ کھلے عام افغانستان میں امریکی ہار کا اعلان کرتے پھر رہے ہیں اور چھپے الفاظ میں اس جنگ سے نکلنے کی بات کر رہے ہیں

امریکی ٹی وی کو ایک تازہ انٹرویو میں ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ افغانستان میں طالبان کی خواہش امن ہے اور ہم بھی اس ایک نہ ختم ہونے والی جنگ لڑ لڑ کر تھک چکے ہیں ۔ طالبان بھی تھک چکے ہیں اور حقیقت میں سب تھک چکے ہیں ۔ ابھی وقت کی فوری ضرورت یہ ہے کہ امریکی فوج کو افغانستان میں سے نکالا جائے اگر آنیوالے وقت میں کوئی نئی ضرورت پیش آئی تو پھر دیکھا جائیگا۔

انہوں نے کہا کہ ہم فوج تو واپس بلا رہے ہیں لیکن افغانستان میں ہمارا انٹیلی جنس سیٹ اپ کام کرتا رہے گا۔ عراق کی صورتحال کے حوالے سے ٹرمپ کا کہنا تھا کہ وہاں پر داعش کا مکمل خاتمہ کیا جا رہا ہے اور جو ایک فیصد داعش عراق میں رہتی ہے جلد اس کا بھی خاتمہ کر دیا جائیگا۔


ای پیپر