بھارتی مسلمان فوجی نے اپنے ساتھی اہلکاروں پر فائر کھول دئیے
04 دسمبر 2019 (16:32) 2019-12-04

دہلی:بھارتی فوج میں مسلمان اہلکار نے اپنے ساتھی فوجیوں پر گولیاں برسا دیں ،بھارتی ریاست چھتیس گڑھ میں انڈین بارڈر فورس کے کانسٹیبل مسعود الرحمن نے اپنے ساتھی ہلکاروں کو اندھا دھند فائرنگ کر کے موت کے گھاٹ اتار دیا ،بعد ازاں فوجی نے خو د کو بھی گولی مار کر خودکشی کر لی ۔

تفصیلات کے مطابق انڈین بارڈر فورس کے اہلکار نے اپنے ساتھی اہلکاروں پر گولیاں برسا دیں جس کے نتیجے میں 5 اہلکار ہلاک اور دو شدید زخمی ہوگئے، بعد ازاں اہلکار نے خود کو بھی گولی مار کر خودکشی کرلی۔

زخمی اہلکاروں کو تشویشناک حالت میں ہیلی کاپٹر کے ذریعے رائے پور کے بڑے اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جہاں دونوں کی حالت نازک بتائی جارہی ہے۔ کانسٹیبل مسعود الرحمان نے بھی سرکاری رائفل سے خود کو گولی مار کر اپنی زندگی کا خاتمہ کرلیا۔

معدنی وسائل سے مالا مال بھارتی ریاست چھتیس گڑھ میں ماو? نواز جنگجو مزاحمتی تحریک چلا رہے ہیں جسے سبوتاڑ کرنے کیلیے حکومت نے لاکھوں فوجی اور نیم فوجی اہلکارتعینات کیے ہیں۔ اس علاقے میں باغیوں نے 2016 سے اب تک 300 خود کش حملے کیے ہیں۔


ای پیپر