فخر زمان کے 193 رنز جیت نہ دلا سکے مگر کئی ریکارڈ بنا گئے
سورس:   فوٹو: بشکریہ ٹوئٹر
04 اپریل 2021 (23:52) 2021-04-04

جوہانسبرگ: پاکستان کرکٹ ٹیم کے اوپننگ بلے باز فخر زمان جنوبی افریقہ کیخلاف دوسرے ون ڈے میچ میں اپنی عمدہ اننگز کی بدولت پاکستان کو جیت تو نہ دلا سکے تاہم ریکارڈ بک میں اپنا نام ضرور درج کروا لیا ہے۔ 

30 سالہ اوپنر نے 155 گیندوں پر 193 رنز کی عمدہ اننگز کھیل کر پاکستا ن کو 342 رنز کے ہدف کے قریب پہنچادیا لیکن آخری اوور کی پہلی گیند پر وہ رن آوٹ ہوگئے اور پاکستان کی جیت کی امیدیں بھی دم توڑ گئیں۔ فخر زمان کی یہ اننگز ایک روزہ انٹرنیشنل کرکٹ میں بعد میں بیٹنگ کرنے والی ٹیم کی جانب سے کسی بھی کرکٹر کی سب سے بڑی اننگز ہے۔ 

اس سے قبل یہ اعزاز آسٹریلیا کے شین واٹسن کے پاس تھا جنہوں نے 2011ءمیں بنگلہ دیش کے خلاف 185 رنز کی اننگز کھیلی تھی۔اس کے علاوہ یہ جنوبی افریقہ کے خلاف کسی بھی پاکستانی بلے باز کا سب سے بڑا سکور ہے جبکہ مجموعی طور پر کسی بھی کھلاڑی کا دوسرا بڑا سکور بھی ہے۔ 

ان سے قبل بھارت کے سچن ٹنڈولکر نے 2011ءمیں جنوبی افریقہ کے خلاف 200 رنز بنائے تھے جبکہ پاکستا ن کی جانب سے سلیم الٰہی نے 2002ءمیں 135 رنز کی اننگز کھیلی تھی۔ جوہانسبرگ کے وینڈررز گراؤنڈ میں جنوبی افریقی سرزمین پر کسی غیر ملکی کرکٹر کی جانب سے بنایا گیا سب سے بڑا انفرادی سکور بھی ہے جبکہ اس سے قبل آسٹریلیا کے ڈیوڈ وارنر نے کیپ ٹاؤن میں 173 رنز بنائے تھے۔

فخر زمان کے 193 رنز میں 10 چھکے شامل تھے یوں وہ جنوبی افریقہ کے خلاف ایک ون ڈے میچ میں 10 یا زائد چھکے لگانے والا تیسرا کھلاڑی ہونے کا اعزاز بھی اپنے نام کر چکے ہیں۔ قبل ازیں نیوزی لینڈ کے جارح مزاج بلے باز مارٹن گپٹل نے جنوبی افریقہ کے خلاف 11 چھکے لگائے جبکہ 2010ءمیں عبدالرزاق بھی جنوبی افریقی باؤلرز کو 10 چھکے لگا چکے ہیں۔ 

فخر زمان کا انفرادی سکور کوئی بھی ون ڈے ہارنے والی ٹیم کی جانب سے دوسرا سب سے بڑا سکور ہے جبکہ اس فہرست میں پہلے نمبر پر زمبابوے کے چارلس کونٹری ہیں جنہوں نے بنگلہ دیش کے خلاف کھیلے گئے میچ میں 194 رنز بنائے تھے مگر وہ بھی اپنی ٹیم کو شکست سے بچانے میں کامیاب نہیں ہو سکے تھے۔ 

(بشکریہ: نیو نیوز)


ای پیپر