بھارتی وزیر اعظم کی بھی پاکستان کیلئے ہرزہ سرائی 
03 اکتوبر 2018 (16:57) 2018-10-03

نئی دہلی: بھارتی وزیراعظم نریندر مودی نے کہا کہ پاکستان لائن آف کنٹرول پر اشتعال انگیزی بند کرے ورنہ بھارت موثر اور فیصلہ کن کارروائی کرنے پر مجبور بھی ہو سکتا ہے، انہوں نے کہا کہ ہم امن چاہتے ہیں لیکن ملک کی سلامتی اور عزت کیساتھ کوئی سودا نہیں کیا جائیگا اور نہ ہی ملکی سلامتی پر سمجھوتہ کیا جا سکتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق صحافیو ں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے الزام عا ئد کیا کہ پاکستان نے سرحدوں پر نفرتوں کے بیچ بوئے ہیں اور وہ اپنا بویا خود ہی کاٹے گا، انہوں نے کہا کہ آئندہ انتخابات کے حوالے سے کہا کہ کشمیر میں لوگوں نے ہمیشہ سے ہی امن اور جمہوریت کا ساتھ دیا ہے اور اس بار بھی ایسا ہی ہوگا، بھارتی وزیراعظم نریندر مودی نے بھارت کو امن پسند ملک قرار دیتے ہوئے کہا کہ ملک کے اندر جمہوری قدروں کی پاسداری کی جارہی ہے اس ملک میں ہر ایک اقلیت کو برابر کے حقوق ہیں، انہوں نے کہا کہ دہشتگردی کا کوئی بھی چہرہ نہیں ہوتا اور ایسے میں دہشتگردی کے خلاف پوری دنیا اٹھ گھڑی ہے۔

 انہوں نے کہا کہ ہمسایہ ملک پاکستان کیساتھ تعلقات کی بہتری کے خواہاں ہیں، تاہم اگر پاکستان نے کوئی اشتعال انگیزی کی جس سے امن کو خطرہ لاحق ہوا تو ایسے اقدام کے خلاف سخت ایکشن لیا جائیگا، انہوں نے کہا کہ بھارت امن پر یقین رکھتا ہے اور امن کے قیام کیلئے تمام تر کوششیں بروئے کار لائیں گے۔


ای پیپر