پرویز مشرف کو دنیا میں کھوکھا الاٹ کرنے کی اجازت نہیں : چیف جسٹس ثاقب نثار
03 جولائی 2018 (22:23) 2018-07-03


اسلام آباد : چیف جسٹس ثاقب نثار نے گنز اینڈ کنٹری کلب اراضی معاملے پر ریمارکس دیئے کہ عدالت اراضی پولی کلینک کے حوالے کرنے کا حکم دے گی‘ پرویز مشرف کو دنیا میں کھوکھا الاٹ کرنے کی اجازت نہیں ‘ دی گنز اینڈ کنٹری کلب نے غیر قانونی طریقے سے زمین پر قبضہ کیا‘ عدالت نے کیس کی سماعت پیر تک ملتوی کردی۔


سپریم کورٹ میں نز اینڈ کنٹری کلب اراضی معاملے کی سماعت ہوئی۔ ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے بتایا کہ اراضی کی منتقلی غیر قانونی طور پر ہوئی۔ چیف جسٹس نے کہا کہ عدالت اراضی پولی کلینک کے حوالے کرنے کا حکم دے گی۔ چیف جسٹس نے کہا کہ پرویز مشرف کو دنیا میں کھوکھا الاٹ کرنے کی اجازت نہیں ۔ چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ کیا کسی کے باپ کی جاگیر ہے پرویز مشرف آکر غیر قانونی اقدامات کی وضاحت کریں۔ ہم کھیلوں کی حوصلہ شکنی نہیں کررہے۔ دی گنز اینڈ کنٹری کلب نے غیر قانونی طریقے سے زمین پر قبضہ کیا۔ عدالت نے گنز اینڈ کنٹری کلب اراضی معاملے کی سماعت پیر تک ملتوی کردی۔


مزید برآں سپریم کورٹ میں ملک میں بڑھتی ہوئی آبادی کے خلاف کیس کی سماعت چیف جسٹس پاکستان میاں ثاقب نثار نے کی ۔دوران سماعت انہوں نے کہا کہ ہم کس چکرمیں پھنس گئے ہیں کہ بچے کم پیدا کرنا اسلام کے خلاف ہے،کیا ملک میں اتنے وسائل ہیں؟۔ چیف جسٹس نے مزیدریمارکس دیتے ہوئے کہا ،کہ عوامی آگاہی مہم بالکل صفرہے،چین نے اپنی آبادی کنٹرول کی ہے،ملک میں آبادی کی شرح میں اضافہ بم ہے۔ جسٹس عمرعطا بندیال نے ریمارکس دیئے کہ مناسب وقفے کے حوالے سے قرآن میں بھی آیات موجود ہیں۔ چیف جسٹس نے استفسار کیا، وفاقی حکومت نے آبادی میں اضافے قابو پانے کے لیے اب تک کتنا پیسہ استعمال کیا؟ایوب خان دور میں بھی آبادی میں اضافے کی شرح کوکنٹرول کرنے کے لیے پالیسی تھی۔ اللہ کے نام پرپاکستان کو قائم کیا گیا،اس ریاست کو چلنا تو ہے۔


ای پیپر