آرمی ایکٹ بل,بلاول بھٹو اچانک ”مکر“گئے
03 جنوری 2020 (23:13) 2020-01-03

اسلام آباد: پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے آرمی ایکٹ بل کی منظور ی سے متعلق حکومت سے مشروط حمایت کے وعدے سے یوٹرن لیتے ہوئے سماجی رابطوں کی ویب سائیٹ ٹوئٹرپر بیان داغتے ہوئے آرمی ایکٹ بل قائمہ کمیٹیوں میں بھیجنے اور وہاں سے منظوری کو بھی جلدبازی قرار دیدیا ۔

جمعہ کو میڈیا سے گفتگو کے دوران بلاول نے کہا تھاکہ اگر حکومت پارلیمانی طریقہ کارکی پاسداری کرے گی توہم اس کی حمایت کرینگے جس کے بعد حکومت نے اس سلسلے میں متعلقہ پارلیمانی طریقہ کار استعمال کیا او ر آرمی ایکٹ بل قائمہ کمیٹیوں میں بھیجے ، اس حوالے سے طریقہ کار کو بلاول بھٹو نے اپنی پارٹی کی کامیابی قرار دیا تاہم رات کے وقت انہوں نے اچانک اپنے موقف پر یوٹرن لیتے ہوئے اس پر تحفظات کا اظہار کردیا اور آرمی ایکٹ بل کی منظور ی سے متعلق حکومت سے مشروط حمایت کے وعدے سے یوٹرن لیتے ہوئے سماجی رابطوں کی ویب سائیٹ ٹوئٹرپر بیان داغتے ہوئے آرمی ایکٹ بل قائمہ کمیٹیوں میں بھیجنے اور وہاں سے منظوری کو بھی جلدبازی قرار دیدیا۔

انہوں نے اس حوالے سے اپنے ٹویٹ میں کہاکہ دونوں ایوانوں میں پارلیمانی قواعد و ضوابط کی پاسداری اداروں کو مضبوط کرے گی ،جلد بازی ایک نقصان دہ عمل ہے۔ پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے سماجی رابطوں کی ویب سائیٹ ٹویٹر پر اپنے اےک ٹویٹ میں کہا کہ میں پھر کہہ رہا ہوں کہ دونوں ایوانوں میں پارلیمانی قواعد و ضوابط کی پاسداری اداروں کو مضبوط کرے گی ،جلد بازی ایک نقصان دہ عمل ہے، میں امید کرتا ہوں کہ پی ٹی آئی اور مسلم لیگ( ن )دونوں قانون سازی کے عمل کی حمایت کریں گے۔


ای پیپر