قاسم سلیمانی کی ہلاکت کے بعد امریکی صدر کا حیران کن ٹوئٹ سامنے آگیا
03 جنوری 2020 (20:06) 2020-01-03

واشنگٹن :ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کو مارنے کے بعد امریکی صدر ٹرمپ کا ردعمل بھی سامنے آگیا ۔

ایرانی کمانڈر قاسم سلیمانی کو ڈرون حملے میں مارنے کے بعد اپنے ٹوئٹر اکاﺅنٹ پر جہاں ٹرمپ نے پرچم لہرا کر دنیا کو ایک واضح پیغام دیا وہیں اپنے ایک پیغام میں امریکی صدر کا کہنا تھا کہ قاسم سلیمانی جیسے شخص کو بہت پہلے مار دینا چاہیے تھا ۔

امریکی صدر نے ایران سے متعلق ایک اہم بیان دیتے ہوئے کہا کہ آج تک ایران نے کبھی کوئی جنگ نہیں جیتی لیکن مذاکرات میں بھی ایران کو کبھی شکست نہیں ہوئی ،عسکری ماہرین کے مطابق ٹرمپ کی اس ڈپلومیسی کا مطلب ممکنہ طور پر ایران کو دوبارہ مذاکرات کی دعوت دینا ہو سکتا ہے ۔

ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کی امریکی ڈرون حملے میں ہلاک کے بعد امریکی صدر کا یہ پہلا بیان ہے جو ٹوئٹ کی شکل میں سامنے آیاہے ، اس سے قبل جنرل قاسم کی ہلاکت پر ٹرمپ نے امریکی پرچم ٹوئٹ کیا تھا۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ٹوئٹر پر اپنے ایک اور پیغام میں کہا کہ جنرل قاسم سلیمانی نے گزشتہ کچھ عرصے کے دوران ہزاروں امریکی شہریوں کو زخمی یا قتل کیا تھا اور مزید امریکیوں کو قتل کرنے کی منصوبہ بندی کر رہا تھا لیکن پکڑا گیا۔ جنرل قاسم سلیمانی بالواسطہ یا بلا واسطہ طور پر لاکھوں لوگوں کے قتل کا ذمہ دار تھا جس میں حال ہی میں مظاہروں کے دوران ایران میں قتل کیے جانے والے افراد بھی شامل ہیں۔


ای پیپر