EU disinfolab, India, false propaganda, Shehryar Khan Afridi, Kashmir
03 فروری 2021 (14:08) 2021-02-03

اسلام آباد: چیئرمین کشمیر کمیٹی شہریار آفریدی نے کہا ہے کہ ای یو ڈس انفولیب نے بھارت کے جھوٹے پروپیگنڈے کو بے نقاب کیا ، بھارت میں مسلمانوں سمیت اقلیتوں کو زبردستی ہندو بنانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے شہریار آفریدی نے کہا کہ پاکستان کی تمام سیاسی جماعتیں مسئلہ کشمیر پر ایک سوچ رکھتی ہیں۔ ایچ ای سی کے تعاون سے دنیا بھر کی یونیورسٹیز سے رجوع کیا گیا ، پاکستان کوشش کر رہا ہے دنیا بھر کی یونیورسٹی کے طلبا کشمیر کے مسئلے کو جانیں ، بھارت کے عزائم کو دنیا کے سامنے لا رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مودی حکومت بھارت میں موجود اقلیتوں کیلئے مسلسل خطرہ ہے ، اقلیتوں کو کچلنے کیلئے مذہب کے نام پر مختلف قوانین بنائے جا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بھارت میں خواتین کی عصمت دری پر عالمی میڈیا خاموشی اختیار کرتا ہے ، پاکستان میں اگر خواتین سے متعلق کوئی معاملہ ہو تو پوری دنیا میں آواز اٹھتی ہے۔ بھارت میں سیاحوں کو جانی و مالی نقصانات پہنچائے جاتے ہیں۔

چیئرمین کشمیر کمیٹی نے کہا کہ بھارت سافٹ امیج کی مدد سے مسلمانوں کی ثقافت کو مسخ کرکے پیش کر رہا ہے ، بھارت کی فلموں میں پاکستان مخالف ایجنڈے کو بڑھا چڑھا کر پیش کیا جاتا ہے۔ بھارت اپنی ثقافتی یلغار کے ذریعے تاریخ کو مسخ کرنا چاہتا ہے۔ آر ایس ایس کو ڈس انفولیب کی طرز پر بے نقاب کریں گے۔

شہریار آفریدی نے کہا کہ ای یو ڈس انفولیب نے بھارت کی اقلیتوں کیخلاف کی جانے والی سازشیں بے نقاب کیں ، بھارت میں اقلیتوں سے انتہائی ناروا سلوک روا رکھا جا رہا ہے ، کوئی آواز بلند نہیں کر رہا۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں جاری ظلم و ستم پر عالمی برادری کو نوٹس لینا چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کی نوجوان نسل موبائل فونز کے ذریعے بھارتی پروپیگنڈے کا توڑ کرسکتی ہے۔ پاکستانی ڈراموں اور ثقافت کے ذریعے کشمیر کے موضوع کو اجاگر کر رہے ہیں۔


ای پیپر