Iran, attack, UAE, Mohsen Fakhrizadeh, America, Israel
03 دسمبر 2020 (08:57) 2020-12-03

تہران : انٹرنیشنل میڈیا کے مطابق ایرانی حکام نے واضح کیا ہے کہ اگر امریکا نے تہران پر حملہ کیا تو وہ جواب میں متحدہ عرب امارات پر حملہ کر دے گا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق ایران نے حملے کی دھمکی براہ راست یو اے ای کے حکمران محمد بن زاید النہیان کو دی ہے۔ ایرانی حکمرانوں کا کہنا تھا کہ اگر امارات کی سرزمین ایران پر حملہ کرنے کے لیے استعمال کی گئی تو ایران جوابی حملہ بھی امارات پر کرے گا۔

خیال رہے کہ ایران کے نامور سائنسدان محسن فخری زادہ کے قتل کے بعد ایران کے اسرائیل اور اُس کے اتحادیوں کے ساتھ تعلقات اور بھی کشیدہ ہو گئے ہیں۔ ایران کا ماننا ہے کہ اسرائیل نے اُن کے سائنسدان کو قتل کیا ہے۔

ایران کے صدر حسن روحانی سمیت اعلیٰ فوجی قیادت نے کہا ہے کہ محسن فخری زادہ کے قتل کا بدلہ ہر حال میں لیا جائے گا۔ اس حوالے سے ایرانی صدر کا کہنا تھا کہ حملہ کا وقت اور مقام وہ خود تعین کریں گے۔

ادھر ایران کی پارلیمنٹ نے جوہری ہتھیاروں کو بنانے کی منظوری دیدی ہے۔ رکن پارلیمنٹ کا کہنا تھا کہ اگر ایران پر بینکنگ اور دوسری پابندیوں میں نرمی نہیں کی جاتی تو وہ اپنا جوہری پروگرام آگے بڑھائے گا۔

واضح رہے کہ امریکا کے علاوہ اسرائیل اور سعودی عرب بھی ایران کے جوہری پروگرام کے خلاف ہے اس لیے وہ عالمی برادی پر زور دے رہے ہیں کہ ایران پر اس حوالے سے بڑی پابندیاں عائد کیں جائیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق امریکا، اسرائیل اور سعودی عرب کے حکمرانوں نے گزشتہ ہفتے خفیہ ملاقات کی تھی جس میں انہوں نے امن معاہدے کے علاوہ ایران پر حملے کرنے پر بھی غور کیا تھا۔ اس ملاقات کے بعد ہی ایران کے سائنسدان محسن فخری زادہ کو قتل کیا گیا ہے۔


ای پیپر