Source : Yahoo

تحریک انصاف کو واضح اکثریت حاصل ہو گئی
03 اگست 2018 (20:21) 2018-08-03

اسلام آباد : قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 205سے آزاد حیثیت میںکامیاب ہونے والے علی محمد مہر نے بنی گالہ میں عمران خان سے ملاقات کی اور تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کر دیا اور کہا کہ عمران خان اس وقت بہترین لیڈر ہیں، ان کی قیادت پر بھرپور اعتماد ہے.

سینئر رہنما تحریک انصاف جہانگیر ترین نے کہا کہ حکومت سازی کےلئے قومی اسمبلی کے 13آزاد ارکان میں سے 9نے پی ٹی آئی میں شمولیت اختیار کرلی ہے، شاہ زین بگٹی سے بات ہوئی اور جلد ملاقات متوقع ہے، بی این پی سے بھی مذاکرات ہو گئے ہیں، ترجمان پی ٹی آئی فواد چوہدری نے کہا کہ قومی اسمبلی سے اب تک 172اراکین کی حمایت حاصل ہو چکی ہے، کون کس عہدے پر فائز ہو گا یہ فیصلہ عمران خان کریں گے۔

جمعہ کو قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 205گھوٹکی سے آزاد حیثیت سے کامیاب ہونے والے علی محمد مہر نے پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کر دیا۔ انہوںنے کہا کہ اس وقت عمران خان سے بہتر کوئی لیڈر نہیں ہے، ان کی قیادت پر بھرپور اعتماد ہے، عوام نے بھرپور مینڈیٹ دیا جس پر میں نے بہت سوچ سمجھ کر تحریک انصاف میں شمولیت کا ارادہ کیا۔ تحریک انصاف کے سینئر رہنما جہانگیر ترین نے کہا کہ حکومت بنانے کےلئے تحریک انصاف کے نمبرز پورے ہو گئے ہیں.

تحریک انصاف مرکز کے ساتھ ساتھ پنجاب میں بھی حکومت بنائے گی، قومی اسمبلی کے 13 میں سے 9آزاد ارکان کی حمایت ہمیں حاصل ہو گئی ہے، سندھ سے علی نواز شاہ بھی ہیں سپورٹ کریں گے، 28نو منتخب آزاد ایم پی ایز میں سے 25سے پی ٹی آئی میں شمولیت اختیار کرلیا ہے۔ جہانگیر ترین نے کہا کہ شاہ زین بگٹی سے بات ہوئی ہے اور جلد ہی ان سے ملاقات متوقع ہے اور بی این پی سے بھی مذاکرات ہو چکے ہیں۔ ترجمان پاکستان تحریک انصاف فواد چوہدری نے کہا کہ نوٹیفکیشن کے بعد 180 اراکین کی تعداد سے آگے نکل جائیں گے،14 اگست تک حکومت سازی کے عاملات طے ہونا مشکل ہے، قومی اسمبلی میں اب تک 172 ارکان کی حمایت حاصل ہو گئی ہے، کون کس عہدے پر فائز ہو گا اس کا فیصلہ عمران خان کریں گے۔


ای پیپر