ڈالر 125روپے۔۔۔؟تشویشناک خبر
03 اپریل 2018 (20:29) 2018-04-03

سکھر:سابق وزیر داخلہ رحمان ملک نے کہا ہے کہ حکومت نے اگر فوری طور پر ایکشن نہ لیا تو ڈالر ایک سو پندرہ روپے سے ایک سو پچیس روپے تک چلا جائے گا ان خیالات کا اظہار انہوں نے سکھر ایئرپورٹ پر گڑھی خدابخش روانگی سے قبل میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا انہوں نے مزید کہا کہ پوری قوم اس وقت سپریم کورٹ سے مطالبہ کرتی ہے کہ بھٹو قتل کیس کے دائر ریفرنس کا فوری فیصلہ دے اور ان کے خلاف جھوٹا قتل کیس داخل کرنے والوں کا بعد ازمرگ بھی ٹرائل کیا جائے ان کا کہنا تھا کہ بھٹو کی پھانسی کا دن ملک کی تاریخ کا سیاہ ترین دن ہے جس میں ملک کے ایک عظیم لیڈر کو پھانسی پر چڑھایا گیا ان کا کہنا تھا کہ ڈیٹ ریٹائرمنٹ پلان نہ ہونے کیوجہ سے ملک کو مقروض بنا دیا گیا ہے.

موجودہ حکومت کو چاہیے کہ وہ قوم کو ڈیٹ ریٹائرمنِٹ پلان دے ان کا کہنا تھا کہ وزیر اعظم ملک کے چیف ایگزیکٹو ہیں اگر انہیں چیئرمین سینیٹ کے انتخاب کے حوالے سے کوئی شک تھا تو تحقیقات کیوں نہیں کرائی ان کا کہنا تھا کہ میمو گیٹ پر آج نواز شریف معافی مانگ رہے ہیں میں ان کو مشورہ دیتا ہوں کہ وہ اداروں سے ٹکراو¿ پر بھی قوم سے معافی مانگ لیں ایسا نہ ہو کہ پھر پانچ سال بعد انہیں پچھتانا پڑ جائے انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم نے چیئرمین سینیٹ کو وقت نہ دے کر ملکی سالمیت اور فیڈریشن کو نقصان پہنچانے کی کوشش کی ہے جس پر وہ قوم سے معافی مانگیں انہوں نے کہا کہ بھٹو شہید کے قتل کیس کے حوالے سے ملکی تاریخی کا اہم فیصلہ ہوگا جس میں 164کے تحت دوبار اسٹیٹمنٹ ہوگی۔


ای پیپر