Image Source : Twitter

لاہور :UET میں پڑھنے والے طلبہ و طالبات کیلئے انتہائی اہم خبر
02 مارچ 2019 (21:13) 2019-03-02

لاہور :یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی (یو ای ٹی)کے انسٹی ٹیوٹ آف بزنس اینڈ منیجمنٹ(آئی بی اینڈ ایم)ڈیپارٹمنٹ نے طلبہ و طالبات کے لیے نیا ڈریس کوڈ (خلاقی لباس)جاری کردیا ہے۔

ڈائریکٹر آئی بی اینڈ ایم کی جانب سے جاری نوٹفکیشن کے مطابق طلبہ کے لیے ڈریس پینٹ/شرٹس یا شلوار قمیض بمع واسکٹ لازمی قرار دیا گیا ہے جبکہ جمعے کو شلوار قمیض کی اجازت ہوگی، اس کے علاوہ طلبہ کے لیے ڈریس شوز پہنا بھی لازمی ہوگا۔نوٹفکیشن کے مطابق طالبات کے لیے دوپٹہ یا اسکارف اوڑھنا لازمی قرار دیا گیا ہے جبکہ جینز، ٹائٹس اور کیپری پینٹس پہننے پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔اسی طرح طالبات پر بغیر آستین والی شرٹس (سلیو لیس) اور کھلے گلے والی شرٹس پہننے پر پابندی ہوگی جبکہ شلوار قمیص، ٹراوزر کے ساتھ لمبی شرٹس پہننے کی اجازت دی گئی۔

یونیورسٹی کی جانب سے یہ جاری کیے گئے اس نئے ڈریس کوڈ کا اطلاق 11 مارچ 2019 سے ہوگا اور خلاف وزری کرنے کی صورت میں 5 ہزار روپے جرمانہ اور اس روز کلاس لینے کی اجازت نہیں ہوگی۔خیال رہے کہ اس سے قبل بھی ایسے واقعات سامنے آئے تھے جب یونیورسٹیز نے اپنے طلبہ و طالبات کو ایسے لباس پہننے سے روکا تھا جسے یونیورسٹی انتظامیہ اخلاقی نہیں سمجھتی تھی۔گزشتہ سال انسٹیوٹ آف بزنس مینجمنٹ (آئی او بی ایم) سے تعلق رکھنے والی کئی طالبات نے سامنے آکر بتایا تھا کہ یونیورسٹی کے گارڈ نے انہیں 'قواعد' کے مطابق لباس نہ پہننے کی وجہ سے یونیورسٹی میں داخل نہیں ہونے دیا تھا۔

اس کے باوجود متعدد یونیورسٹیز ایسی ہیں جنہوں نے طلبہ اور طالبات کے لیے الگ الگ ڈریس کوڈز تیار کرکے رکھے ہیں، جن پر سختی سے عمل کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔اس بحث کا آغاز چند سال قبل اس وقت ہوا تھا جب نیشنل یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی (نسٹ)کی چند طالبات کو جینز، ٹائٹس پہننے اور دوپٹہ نہ پہننے پر شرمندہ کیا گیا تھا۔


ای پیپر