ہماری امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھا جائے، آرمی چیف
سورس:   فائل فوٹو
02 فروری 2021 (19:23) 2021-02-02

راولپنڈی: پاک فوج کے سپہ سالار نے کہا کہ پاکستان اور بھارت دونوں ممالک کو پرانے تنازع مسئلہ کشمیر کو حل کرنا چاہیئے۔ یہ وہ وقت ہے جب امن کا ہاتھ ہر طرف بڑھنا چاہیے۔ پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی چیف جنرل نے جی ڈی پائلٹ پاسنگ آؤٹ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ مسئلہ کشمیر پروقار اور پرامن طریقے سے کشمیریوں کی خواہشات کے مطابق حل ہونا چاہیے۔

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ پاکستان امن سے محبت کرنے والا ملک ہے جبکہ ہم باہمی احترام اور پرامن بقائے باہمی کے اصولوں پر یقین رکھتے ہیں۔ پاکستان نے علاقائی اور عالمی امن کے لیے بہت قربانیاں دی ہیں۔

ان کا اپنے خطاب میں مزید کہنا تھا کہ ہماری امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھا جائے کیونکہ پاکستان کی مسلح افواج ہر خطرے سے نمٹنے کے لیے تیار ہیں۔

آرمی چیف نے دہشتگردی کے خلاف جنگ میں پاک فضائیہ کے کردار کو سراہتے ہوئے کہا عوام کو پاک فضائیہ پر فخر ہے اور ہمیں فخر ہے ہم مذہب، بھائی چارے اور ثقافتی اقدار سے جڑے ہیں جبکہ ملک دشمنوں کیخلاف آپریشنز میں مسلح افواج کے درمیان تعاون سے بہتری آئی اور امید ہے ایئر فورس عظمت اور مہارت کی بلندیوں کو چھوئے گی۔ تقریب کے دوران آرمی چیف نے سعودی عرب کے کیڈٹس کی موجودگی کو بھی سراہا۔ 

 بشکریہ (نیو نیوز)


ای پیپر