PM Modi, BJP government, India, farmers, protest, budget
02 فروری 2021 (11:19) 2021-02-02

نیو دہلی: بھارت میں بجٹ کے موقع پر کسانوں کو احتجاج سے روکنے کے لیے دہلی کی سڑکیں بند کر دی گئیں۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق دہلی کے متعدد علاقوں میں انٹرنیٹ اور میسجنگ سروسز کو بھی بلاک کر دیا گیا ہے ، پولیس اور پیرا ملٹری فورسز نے نئی دہلی تک جانے والے راستوں پر گہرے گڑھے کھود دیئے ہیں ، اہم شاہراہوں پر خار دار تاریں لگا دی ہیں تاکہ مظاہرین کو دارالحکومت میں داخل ہونے سے روکا جا سکے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز کسانوں کے احتجاج پر خاموشی توڑتے ہوئے وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا کہ جن لوگوں نے لال قلعے پر ہنگامہ آرائی کی اور دوسرا جھنڈا لہرایا اُن کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔

اپنے بیان میں ہندوستان کے وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا ہے کہ پچھلے ہفتے نئی دہلی کے لال قلعے پر طوفان برپا کرنے والے مظاہرین نے ملک کی "توہین" کی ہے جس کو حکومت کسی صورت برداشت نہیں کرے گی۔ بلکہ اُن کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔

بھارتی وزیر اعظم کے بیان کا جواب دیتے ہوئے کسانوں نے واضح کیا کہ تمام مطالبات کی منظوری تک دھرنا ختم نہیں کیا جائے گا۔ کسانوں کی بڑی تعداد دہلی ہریانہ سنگھو سرحد پر دھرنا دیے بیٹھی ہے۔


ای پیپر