سابق وزیر اعظم میر ظفر اللہ خان جمالی انتقال کر گئے 
02 دسمبر 2020 (22:00) 2020-12-02

اسلام آباد :سابق وزیر اعظم میر ظفر اللہ جمالی انتقال کر گئے ،میر ظفر اللہ جمالی کو کچھ دن پہلے دل کا دورہ پڑنے پر انہیںہسپتال منتقل کیا گیا تھا ، میر ظفر اللہ جمالی عسکری ادارہ امراض قلب میں زیر علاج تھے ۔

تفصیلات کے مطابق میر ظفر اللہ جمالی گزشتہ کئی روز سے ہسپتال میں زیر علاج تھے ،دل کا دورہ پڑنے پر انہیں ہسپتال منتقل کیا گیا تھا ،میر ظفر اللہ جمالی گزشتہ چند دن سے وینٹی لیٹر پر تھے ، میرظفراللہ جمالی اےایف آئی سی اسپتال راولپنڈی میں زیرعلاج تھے،میر ظفر اللہ جمالی مئی میں کرونا کا شکار بھی ہوچکے تھے،میر ظفر اللہ جمالی کے بیٹے عمر جمالی نے اپنے والد کے انتقال کی تصدیق کر دی ۔

سابق وزیراعظم میرظفر اللہ جمالی یکم جنوری 1944 کو پیدا ہوئے،میر ظفر اللہ جمالی نے ابتدائی تعلیم روجھان جمالی میں ہی حاصل کی،میر ظفر اللہ جمالی نے لاہور گورنمنٹ کالج یونیورسٹی سے بھی تعلیم حاصل کی،میر ظفر اللی جمالی ایچی سن میں بھی پڑھتے رہے،میر ظفر اللہ جمالی 1985 میں پہلی بار رکن قومی اسمبلی بنے،میر ظفر اللہ جمالی نے 1999 میں مسلم لیگ ق کے سیکرٹری جنرل کا عہدہ سنبھالا۔

میر ظفر اللہ جمالی  21 جون 2002 سے26 جون 2004 تک وزیر اعظم پاکستان رہے،میر ظفر اللہ جمالی واحد وزیر اعظم تھے جن کا تعلق بلوچستان سے تھا،پرویز مشرف نے شوکت عزیز کو وزیر اعظم بنانے کے لئے میر ظفر اللہ جمالی سے وزارت عظمی سے استعفی لے لیا تھا،میر ظفر اللہ جمالی2 مرتبہ سینیٹ آف پاکستان کے رکن رہے۔میر ظفر اللہ جمالی پرویزمشرف کی آمریت کے باوجود ڈاکٹر عبدالقدیر خان کے لئے ڈھال بنے رہے۔


ای پیپر